Thursday, July 9, 2020  | 17 ZUL-QAADAH, 1441
ہوم   > بین الاقوامی

کرونا کے باوجود ایران اور امریکا کی سیاست جاری

SAMAA | - Posted: Mar 26, 2020 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 26, 2020 | Last Updated: 3 months ago

عام شہری پسنے لگے

امريکا نے کہا ہے کہ ايران انسانی جانوں کی حفاظت کیلیے امدادی کاموں کی اجازت دے مگر ایران نے پابندیوں کا احساس دلاتے ہوئے کہا ہے امریکا تیسرے درجے کا پراپیگنڈا بند کرے۔

کورونا وائرس نے امریکا اور ایران دونوں کو مفلوج کردیا ہے۔ ایران میں مجموعی اموات زیاددہ جبکہ امریکا میں یومیہ اموات ک شرح زیادہ ہوچکی۔ مگراس صورتحال میں دونوں جانب سے پراپیگنڈا وار زوروں پر ہے۔

امریکی دفترخارجہ کی پرنسپل نائب معاون سیکریٹری ایلس ویلز نے ٹویٹ پیغام میں کہا ہے کہ ایران کو اپنے ملک میں انسانی بحران سے نمٹنے کے لیے امریکی امداد قبول کرنی چاہیے تاکہ کورونا وائرس سے نمٹا جاسکے۔

ایسا ہی بیان امریکا کے وزیرخارجہ مائیک پومپیونے گزشتہ روز دیا تھا جس پرایران کے وزیرخارجہ جواد ظریف نے پوچھا ہے کہ مائیک پومپیو امریکا کے وزیر خارجہ ہیں یا وزیر نفرت۔ واشنگٹن سے کہا ہے کہ کورونا وبا کے دنوں میں تیسرے درجے کا پراپیگنڈا بند کرے۔

ایرانی سپریم لیڈر خامنہ ای پہلے ہی امریکا کی جانب سے امداد کی پیشکش مسترد کرچکے ہیں۔ ان کا مطالبہ ہے کہ انسانیت کی ہمدردی ہے تو پابندیاں ختم کردیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube