Thursday, March 4, 2021  | 19 Rajab, 1442
ہوم   > بین الاقوامی

ہیثم بن طارق عمان کے نئے سلطان مقرر

SAMAA | - Posted: Jan 11, 2020 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Jan 11, 2020 | Last Updated: 1 year ago

 سلطان قابوس کے انتقال کے بعد ہیثم بن طارق السید کو عمان کا نیا سلطان مقرر کردیا گیا، انہوں نے اپنے عہدے کا حلف بھی اٹھالیا۔

عرب دنیا میں طویل ترین حکمرانی کرنیوالے عمان کے سلطان قابوس بن سید السید 79 برس کی عمر میں جمعہ کو انتقال کرگئے تھے، ان کی جگہ سابق سلطان کے چچا زاد بھائی ہیثم بن طارق بن تیمور کو عمان کا نیا سلطان مقرر کردیا گیا ہے۔

سابق وزیرِ ثقافت و ورثہ ہیثم بن طارق نے آج (ہفتہ کو) شاہی خاندان کی کونسل کی میٹنگ کے بعد اپنے عہدے کا حلف اٹھا کر نئے سلطان کی ذمہ داریاں سنبھال لیں۔

سلطان قابوس گزشہ ماہ بیلجیئم سے طبی معائنے اور علاج کے بعد واپس اپنے وطن آگئے تھے، اطلاعات کے مطابق وہ کینسر کے مرض میں مبتلا تھے، انہوں نے عمان پر تقریباً 5 دہائیوں تک حکمرانی کی، وہ 1970ء میں اپنے والد کو معزول کر کرکے عمان کے سلطان بنے تھے۔

عمانی سلطنت کے قانون کے مطابق شاہی خاندان کی تقریباً 50 ارکان پر مشتمل کونسل تخت خالی ہونے کے 3 دن کے اندر نیا سلطان منتخب کرنے کی پابند ہوتی ہے۔

تاہم شاہی خاندان کے متفق نہ ہونے پر دفاع کونسل کے ممبران، سپریم کورٹ، مشاورتی کونسل اور ریاستی کونسل کے صدر ایک مہر بند لفافہ کھولتے، جس میں سلطان قابوس نے خفیہ طور پر اپنی پسند کے تخت نشین کا نام درج کرکے رکھ دیا تھا، جسے تخت نشین کرنا پڑتا۔

عمان کے سلطان قابوس نے پوری زندگی شادی نہیں کی تھی۔ رپورٹس کے مطابق عمان کے شاہی تخت تخت کے اہم دعویداروں میں 3 بھائی شامل تھے جو سلطان قابوس کے چچا زاد تھے، جن میں وزیر ثقافت ہیثم بن طارق السید، نائب وزیراعظم اسعد بن طارق السید اور عمان بحریہ کے سابقہ کمانڈر شہاب بن طارق السید شامل ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
OMAN, Haitham bin Tariq, SULTAN QABOOS, ARAB
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube