Thursday, October 1, 2020  | 12 Safar, 1442
ہوم   > Latest

اسامہ بن لادن کا بیٹا حمزہ مارا گیا، امریکا کا دعویٰ

SAMAA | - Posted: Aug 1, 2019 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Aug 1, 2019 | Last Updated: 1 year ago

امریکا نے دعویٰ کیا ہے کہ القاعدہ سربراہ اسامہ بن لادن کا بیٹا حمزہ بن لادن ایک حملے میں مارا گیا۔ تاحال اس دعوے کی آزاد ذرائع سے تصدیق نہیں ہوسکی۔

امریکی حکام کے اسامہ بن لادن کے بیٹے کی ہلاکت سے متعلق دعوے کی تفصیلات سامنے نہیں لائی گئیں کہ انہیں کب اور کہاں ہلاک کیا گیا ہے۔

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق اس بات کی تصدیق کی گئی ہے کہ امریکا حمزہ بن لادن کو ہلاک کرنے کے آپریشن میں شامل تھا لیکن تفصیلات کے بارے میں کوئی وضاحت نہیں دی گئی۔

امریکی اخبار سے بات کرتے ہوئے ایک حکومتی اہلکاروں نے یہ ضرور بتایا کہ حمزہ بن لادن کی موت صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے منتخب ہونے کے پہلے 2 سال کے دوران ہوئی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس آپریشن سے متعلق بات کرنے سے انکار کردیا تھا۔ وائٹ ہاؤس کی جانب سے بھی اس خبر پر کوئی وضاحت نہیں دی گئی۔

حمزہ بن لادن کی عمر 30 سال تھی اور 11 ستمبر 2001ء میں ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر حملے کے وقت وہ اپنے اسامہ بن لادن کے ساتھ افغانستان میں تھے جبکہ مئی 2011ء میں اسامہ بن لادن کی ہلاکت کے موقع پر حمزہ ایران میں نظر بند تھے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube