ہوم   > Latest

امریکی کانگریس میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کیخلاف قرار داد منظور

1 month ago

امریکی کانگریس نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کیخلاف قرار داد منظور کرلی، جس میں چار غیر سفید فام خواتین ارکان کانگریس کیخلاف نسل پرستانہ بیانات کی مذمت کی گئی۔

امریکی کانگریس میں منگل کو منظور کی گئی قرار داد میں کہا گیا ہے کہ صدر ٹرمپ کے بیانات سے امریکا میں نئے آنے والوں اور غیر سفید فام امریکیوں سے خوف اور ان کیخلاف نفرت کو تقویت ملی ہے۔

قرارداد میں صدر ٹرمپ کی طرف سے امریکا میں آنیوالے پناہ گزینوں اور تارکین وطن کو ‘حملہ آور‘  قرار دینے کی بھی مذمت کی گئی۔

ٹرمپ کی جانب سے نسل پرستانہ ریمارکس کا نشانہ بننے والی حزب اختلاف کی 4 ارکان میں ہسپانیہ کی الیگزینڈرا اوکاسیو کورتیز، فلسطینی نژاد راشدہ طلیب، صومالیہ کی الہان عمر اور افریقا سے تعلق رکھنے والی آیانا پریسلی شامل ہیں۔

امریکی کانگریس کی چاروں ارکان صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی پالیسیوں کی مخالفت کیلئے مشہور ہیں، واشنگٹن میں ان کا گروپ  ‘دی اسکواڈ‘  کے نام سے مشہور ہے۔

کانگریس میں ووٹنگ کے دوران 240 ارکان نے صدر ٹرمپ کیخلاف قرارداد کے حق میں ووٹ دیئے جبکہ 187 نے اس کی مخالفت کی، امریکی ایوان نمائندگان میں ڈیموکریٹ پارٹی کی اکثریت ہے لیکن اس قسم کی مذمتی قرارداد کا ایوان بالا یعنی سینیٹ سے منظور ہونا مشکل ہے کیونکہ سینیٹ میں ری پبلکن پارٹی اکثریت میں ہے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
سیالکوٹ: اسکول کی خستہ عمارت، طلبہ کی زندگیاں خطرے میں