مشرق وسطیٰ میں امریکی فوج میں اضافہ عالمی سلامتی کیلئے خطرہ ہے، جواد ظریف

May 25, 2019

ایرانی نے مشرق وسطیٰ میں امریکی فوجیوں کی تعداد میں اضافے کو عالمی سلامتی کیلئے خطرہ قرار دے دیا، جواد ظریف کہتے ہیں کہ امریکا کا 1500 فوجیوں کو مشرق وسطیٰ بھیجنے کا فیصلہ خطرناک ہے۔

پاکستان کے دورے سے واپسی سے قبل ایرانی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’’ارنا‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف کا کہنا تھا کہ امریکا کی جانب سے مشرق وسطیٰ میں 1500 اضافی فوجیوں کو بھیجنے کا فیصلہ "بین الاقوامی سلامتی کیلئے خطرہ" ہے۔

مزید جانیے : امریکا کا مشرق وسطیٰ میں مزید 1500 فوجی بھیجنے کا فیصلہ

جواد ظریف نے مزید کہا کہ ہمارے خطے میں امریکی اداروں کی موجودگی بین الاقوامی امن اور سلامتی کیلئے انتہائی خطرناک ہے اور اس کا مقابلہ کیا جانا چاہئے۔

یہ بھی پڑھیں : حالات بات چیت کیلئے موزوں نہیں، ہمارا اختیار مزاحمت ہے، ایرانی صدر

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے جمعہ کے روز 1500 اضافی فوجیوں کو مشرق وسطیٰ بھیجنے کی منظوری دینے کا اعلان کیا تھا۔ ٹرمپ نے باور کرایا تھا کہ مشرق وسطیٰ میں اضافی فورسز کی تعیناتی ایک "احتیاطی اقدام" ہے جس کا مقصد تحفظ فراہم کرنا ہے۔