امریکی طیاروں کی ’’فرینڈلی فائرنگ‘‘ سے 18 افغان اہلکار ہلاک

May 18, 2019

امریکی فضائیہ نے ایک بار پھر دہشت گرد سمجھ کر افغان فورسز پر بمباری کردی، واقعے میں 18 اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ہلمند کے دارالحکومت لشکر گاہ کے قریب طالبان اور افغان فورسز کے مابین جھڑپیں جاری تھیں، اس دوران امریکی فضائیہ کے طیارے افغان فورسز کی مدد کو آئے لیکن غلطی سے افغان سیکیورٹی فورسز کے اہلکاروں پر ہی بم برسادیے، واقعے میں 18 اہلکار مارے گئے جبکہ 14 زخمی ہوگئے۔

امریکی فوجی حکام نے اپنے بیان میں واقعے کو افسوسناک سانحہ قرار دیا اور واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ امریکی فضائیہ کی بمباری میں طالبان اور افغان سیکیورٹی فورسز کے اہلکار ہلاک ہوئے۔

انہوں نے بتایا کہ افغان فوج نے امریکی فضائیہ سے مدد کی درخواست کی اور کہا تھا کہ ایریا کلیئر ہے، اس لئے فضائی بمباری کی جائے لیکن افسوس کے ساتھ کہنا پڑ رہا ہے کہ ایریا کلیئر نہیں کیا گیا تھا۔