مصرکی عدالت نے 75 افراد کو سزائے موت سنادی

September 9, 2018

مصرکی عدالت نے اخوان المسلمین کے رہنماوں سمیت 75 افراد کو سزائے موت سنادی۔

خبر رساں ایجنسی کی جانب سے جاری اطلاعات کے مطابق مصری عدالت نے 700 سے زائد افراد کے مقدمے کا فیصلہ سنایا، جن پر سال 2013ء میں مرسی حکومت کے مخالف دھرنے میں شریک افراد کے قتل کا الزام تھا۔ مقدمے میں  75 افراد کو سزائے موت سنائی گئی ہے ۔

ایجنسی رپورٹس کے مطابق عدالت نے اس مقدمے میں 47افراد کو عمر قید  کی سزا بھی سنائی، جس میں زیادہ تر مذہبی رہنما شامل ہیں۔ سزا پانے والوں میں اخوان المسلمین کے سینیر رہنما اعصام العریان ، محمد البلتاجی اور صفوت حجازی شامل ہیں۔

دوسری جانب انسانی حقوق کی تنظیم ایمنیسٹی انٹرنیشنل نے اس مقدمے کو 'انتہائی غیر منصفانہ قرار دیتے ہوئے اسے مصر کے آئین کی خلاف کہا ہے۔