پاکستان پر دباؤ بڑھانے کیلئے مزید اعلانات متوقع ہیں، وائٹ ہاؤس

Samaa Web Desk
January 3, 2018

واشنگٹن: ترجمان وائٹ ہاوس نے کہا ہے کہ پاکستان اپنی ذمہ داریاں پوری نہیں کررہا ہے،پاکستان پر دباؤ بڑھانے کے لیے جلد مزید اقدامات کریں گے۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق ترجمان وائٹ ہاوس سارہ سینڈرز نے کہا ہے کہ ہم چاہتے ہیں پاکستان دہشت گردی کے خلاف مزید اقدامات کرے اس کے لیے چند دنوں میں امریکا کی جانب سے پاکستان پر دباؤ بڑھانے کے لیے مزید اعلانات متوقع ہیں۔

ترجمان وائٹ ہاؤس سارہ سینڈرز نے الزام عائد کیا کہ ہم جانتے ہیں کہ پاکستان دہشت گردی کے خلاف مزید اقدامات کرسکتا ہے لیکن وہ اپنی ذمے داریاں پوری نہیں کررہا، اسے وعدوں پر عمل کرنا چاہیے۔

ترجمان کے مطابق پاکستان کی امداد سے متعلق تمام آپشنز کھلے ہیں اور صدر ڈونلڈ ٹرمپ رواں ماہ اس حوالے سے فیصلہ کریں گے، سارہ سینڈرز نے کہا کہ پاکستان کے خلاف مخصوص اقدامات کی تفصیلات آئندہ 24 سے 48 گھنٹوں میں سامنے آجائیں گی۔

اس سے قبل اقوام متحدہ میں امریکی سفیر نکی ہیلی نے کہا ہے کہ امریکا پاکستان کی 25 کروڑ 50 لاکھ ڈالر کی امداد روک رہا ہے، اقوام متحدہ میں صحافیوں سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ امداد روکنے کا تعلق فلسطین پر قرارداد سے نہیں بلکہ دہشتگردوں کو پناہ دینے سے ہے۔

انھوں نے کہا کہ وہ اکثر ہمارے ساتھ کام کرتے ہیں اور افغانستان میں ہماری فوجوں پر حملے کے لیے دہشت گرد بھی بھیجتے ہیں۔ یہ کھیل اس انتظامیہ کے لیے قابل قبول نہیں ہے۔ ہم دہشت گردی کے خلاف لڑائی میں پاکستان سے کہیں زیادہ تعاون کی توقع رکھتے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا ہم دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان سے کہیں زیادہ تعاون چاہتے ہیں۔