Saturday, November 28, 2020  | 11 Rabiulakhir, 1442
ہوم   > بین الاقوامی

پولیس اکیڈمی پر خودکش حملہ، 18 افسر و اہلکار ہلاک

SAMAA | - Posted: Dec 14, 2017 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Dec 14, 2017 | Last Updated: 3 years ago

موغادیشو : صومالیہ کی پولیس اکیڈمی میں دھماکے 18 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے، پولیس نے واقعے کو خود کش قرار دے دیا۔ غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق صومالیہ کے دارالحکومت موغا دیشو کی پولیس اکیڈمیں ایک خود کش بمبار پولیس افسر کی وردی میں ملبوس ہوکر داخل ہوا اور دھماکا کردیا، واقعے...

موغادیشو : صومالیہ کی پولیس اکیڈمی میں دھماکے 18 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے، پولیس نے واقعے کو خود کش قرار دے دیا۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق صومالیہ کے دارالحکومت موغا دیشو کی پولیس اکیڈمیں ایک خود کش بمبار پولیس افسر کی وردی میں ملبوس ہوکر داخل ہوا اور دھماکا کردیا، واقعے میں 18 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے۔

مقامی افسر کرنل محمد عدن کا کہنا ہے کہ دھماکے کی ذمہ داری الشباب نے قبول کرلی، خودکش بمبار نے دھماکا خیز مواد اپنی کمر کے گرد باندھا ہوا تھا اور پولیس ڈے کے جشن کی تیاریوں میں مصروف افسرا کو نشانہ بنایا، تقریبات کا انعقاد 20 دسمبر کو ہونا تھا۔

دھماکے کے وقت جائے وقوعہ پر موجود پولیس افسر فرح عمر کا کہنا ہے کہ خودکش بمبار نے ایسی جگہ پر دھماکا کیا جہاں درجنوں افسران و سپاہی موجود تھے، اس کا مقصد زیادہ سے زیادہ نقصان پہنچانا تھا۔

واضح رہے کہ القاعدہ کی اتحادی صومالیہ کی شدت پسند تنظیم الشباب تواتر کے ساتھ ہوٹل، چیک پوائنٹس اور دیگر اہم مقامات کو نشانہ بناتی رہی ہے، رواں سال اکتوبر میں موغا دیشو میں ٹرک بم حملے میں 512 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

افریقا میں تیزی سے بڑھتی ہوئی الشباب امریکی تنصیبات پر بھی حملوں میں ملوث ہے، ڈونلڈ ٹرمپ نے تنظیم کیخلاف فضائی حملوں میں تیزی لانے کی ہدایت کردی ہے، رواں سال صومالیہ میں شدت پسندوں کے ٹھکانوں پر 32 ڈرون حملے کئے گئے۔ ایجنسیز

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube