ایران،عراق میں7.3شدت کےزلزلےنےتباہی مچادی

November 13, 2017

تہران: ایران اور عراق کےسرحدی علاقوں میں 7.3 شدت کے بدترین زلزلے نے تباہی مچادی۔ اب تک کی اطلاعات کےمطابق زلزلے سے مرنےوالوں کی تعداد 130 سے تجاوز کرگئی ہے۔ درجنوں افرادزخمی اور امداد کےمنتظر ہے۔

غیرملکی خبرایجنسی کےمطابق عراق اور ایران کے سرحدی علاقےحلبجا سے31 کلومیٹر میں رات 9بج کر18 منٹ پر شدید نوعیت کا زلزلہ آیا۔ زلزلےکی شدت 7.2 ریکارڈ کی گئی۔ زلزلے کی گہرائی 32 کلومیٹرزیرزمین ریکارڈ کی گئی۔

زلزلے کے جھٹکے عراق سمیت ترکی ، متحدہ عرب امارات اور کویت میں بھی محسوس کئےگئے۔

دوران نشریات زلزلےکےخوفناک مناظر

زلزلے کے دوران عراقی شہر بغداد کی عمارتیں 20 سیکنڈ تک لرزتی رہیں۔ کاظمین شہر میں بھی لوگ خوف کےباعث گھروں سے باہرنکل آئے۔

سب سے زیادہ نقصان ایرانی سرحدی علاقےمیں ہواہے۔عراق کے سرحدی علاقوں سے بھی جانی نقصان کی اطلاعات موصول ہورہی ہیں۔

ایرانی ہلال احمرنے اعلان کیاہےکہ زلزلے کےباعث 70 ہزار افرادمتاثر ہوئے ہیں۔ ایران کے 8 گاؤں میں زلزلےسےنقصان پہنچاہے۔ان علاقوں میں بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔ ایران کے ہنگامی امورکےادارے کےسربراہ نے خدشہ ظاہر کیاہےکہ ایران میں زلزلے سے مرنےوالوں کی تعداد تقریبا سوتک ہوگئی ہے۔

عراق میں دربندی خان کے علاقے میں بڑے نقصان کی اطلاعات ہیں۔ ضلع کے مرکزی اسپتال کونقصان پہنچاہے اور زخمیوں کونزدیکی شہر سلیمانیہ لےجایاگیاہے۔

ایرانی سرحد کے نزدیک عراقی علاقے حلبجا،خاناقین اورپنجون میں زیادہ نقصان ہونےکی اطلاعات ہیں۔    سماء

Email This Post
 

:ٹیگز

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.