بھارت میں عدالتی جنگ تماشا بن گئی

May 9, 2017

کولکتہ : ہائی کورٹ کے جج اور سپریم کورٹ کے درمیان رسہ کشی کا ڈراپ سین ہوگیا۔سپریم کورٹ نےکولکتہ ہائی کورٹ جج کوتوہین عدالت پرچھ ماہ قید کی سزا سنادی۔

بھارت میں چند ماہ ہوئےکولکتہ ہائی کورٹ اورسپریم کورٹ میں دلچسپ رسہ کشی شروع ہوئی۔جنوری میں کولکتہ ہائی کورٹ کے جج کرنن نے چیف جسٹس اوردیگرججوں کوپانچ پانچ سال قید کی سزا سنائی۔جسٹس كرنن کا کہنا تھا کہ جج صاحبان قوانین کی تشکیل میں اجتماعی جرم کے مرتکب ہوئے۔یہ فیصلہ سن کرپورا بھارت ہی سٹپٹاگیا۔

سپریم کورٹ نے یکم مئی کوحکم دیا کہ جسٹس کرنن کی ذہنی حالت کا معائنہ کروایا جائےمگرجسٹس کرنن نےانکارکردیا اورکئی بار طلب کرنے پرپیش بھی نہ ہوئے۔  اس دوران سپریم کورٹ پرمختلف الزامات لگاتے رہے۔بھارت میں ججوں کی عجیب جنگ بڑی خبر بن گئی۔

سپریم کورٹ اس توہین پرتلملاگئی۔جسٹس چنا سوامی كرنن کوچھ ماہ قید کی سزا سنادی گئی اوران کی گرفتاری کاحکم دیدیا گیا مگرکرنن رات گئے صوبے سے باہر جاچکے تھے۔

عدالت نے میڈیا کومعاملےسےدوررہنے کا حکم دیاہے۔ سماء