افغانستان میں دہشت گردوں کی کوئی پناہ گاہیں نہیں،اشرف غنی کادعویٰ

SAMAA | - Posted: Jan 22, 2016 | Last Updated: 5 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 22, 2016 | Last Updated: 5 years ago

Ashraf-Ghani__2938933b

کابل / پشاور : افغان حکومت نے باچا خان يونيورسٹي حملے ميں افغانستان کے ملوث ہونے کے دعوے کو مسترد کر ديا ہے، افغان صدر اشرف غني کا کہنا ہے کہ حملے کيلئے افغانستان کي سرزمين استعمال نہيں کي گئي۔
باچا خان يونيورسٹي حملے کے تانے بانے تو افغانستان ہي کي سرزمين سے ملتے ہیں، جب کہ دہشت گردوں کے ساتھ ماسٹر مائنڈ کا رابطہ بھي افغانستان کے نمبر سے ہوتا رہا، پاک فوج کے ترجمان نے بھي اس امر کي تصديق کي کہ حملے کي کڑياں افغانستان سے ملتي ہيں، مگر کیا کہنے افغان صدر کے ناقابل تردید ثبوتوں کے باجود انکار کرتے رہے۔

افغان صدر کے ترجمان کے مطابق افغان صدر اشرف غني نے تمام حقائق کو مسترد کر ديا ہے، صدارتي محل سے جاري بيان ميں انہوں نے نہ صرف سانحہ چارسدہ کي مذمت بلکہ يہان تک کہہ گئے کہ افغانستان ميں تو دہشت گردوں کي کوئي محفوظ پناہ گاہ ہي نہيں۔ سماء

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube