Saturday, January 22, 2022  | 18 Jamadilakhir, 1443

پاکستان میں پہلی باروبائی امراض کے مختلف ویرینٹس کی تشخیص کیلئےلیب قائم

SAMAA | - Posted: Dec 1, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 1, 2021 | Last Updated: 2 months ago

پاکستان میں پہلی بار وبائی امراض کے مختلف ویرینٹس کی تشخیص کے لئے عالمی ادارہ صحت کے تعاون سے باقاعدہ لیب نے کراچی میں کام شروع کردیا ہے۔

اس لیب میں تمام وبائی امراض پھیلانے والے جراثیم اور ان کے ویرینٹس کی جینیاتی لیول پر تشخیص اب پہلی بار ممکن ہوگی۔ یہ لیب کراچی کے ڈاؤاسپتال میں قائم کی گئی ہے۔

پرووینشل پبلک ہیلتھ لیب کے سربراہ ڈاکٹر سعید خان نے اس کےقیام کو انتہائی کامیاب سنگ میل قرار دیا ہے۔اس لیب میں نئے ویرینٹس کی تشخیص کرنے میں مدد ملے گی۔لیب میں این جی ایس ٹیکنالوجی کے ذریعے ریسرچ پر کام ہوگا۔

ڈاکٹر سعید خان نے بتایا ہے کہ نئے ویرینٹ کی ٹرانمیشن بہت تیزہے اور یہ مدافعتی نظام کو بہت آسانی سے دھوکہ دے سکتا ہے۔اگرمدافعتی نظام کمزور ہے تو یہ اپنا وار کرسکتا ہے اور تمام ویکسین اس پر اثرانداز نہیں ہوگی تاہم ویکسین کے حوالے سے ابھی تحقیقات جاری ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube