Wednesday, January 19, 2022  | 15 Jamadilakhir, 1443

سندھ:کروناکی نئی خطرناک قسم،ویکسینیڈافرادکوبوسٹرلگانےکافیصلہ

SAMAA | - Posted: Nov 28, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 28, 2021 | Last Updated: 2 months ago

فائل فوٹو

سیکریٹری صحت سندھ ذوالفقارعلی شاہ کا کہنا ہے کہ صوبے میں ویکسینیشن کرنے والے تمام افراد بطور بوسٹر فائزر ویکسین لگواسکیں گے، جس کا حتمی طور پر فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

محکمہ صحت سندھ نے کرونا کی نئی لہر سے بچاؤ کے لئے اہم فیصلہ کرتے ہوئے اب تمام ویکسینیٹڈ افراد کو بطور بوسٹر فائزر ویکسین بھی لگوانے کا اعلان کیا ہے، تاہم بوسٹر ڈوز لگانے کی کوئی فیس نہیں لی جائے گی۔

سیکریٹری صحت سندھ ذوالفقارعلی شاہ کے مطابق آئندہ دو سے تین دنوں میں نوٹی فکیشن بھی جاری ہو جائے گا، فیصلہ کرونا کی نئی لہر سے حفاظتی تدابیر کے طور پر لیا گیا ہے۔

سیکریٹری صحت کا کہنا تھا کہ کوئی سی بھی ویکسینیشن کے دو ڈوز مکمل ہونے کے بعد شہری بطور بوسٹر فائزر ویکسین لگواسکیں گے۔ فائزر ویکسین کو بطور بوسٹر پہلے بھی استعمال کیا جاچکا ہے۔

ائیرپورٹ پر ویکسینیشن کے حوالے سے فیصلہ وفاقی حکومت کرے گی۔ اس وقت بوسٹر ڈوز صرف جناح اسپتال اور ڈاؤ اوجھا اسپتال میں دستیاب ہے، کوشش ہے کہ بوسٹر ڈوز کا دائرہ پورے سندھ تک پھیلایا جائے، بوسٹر ڈوز لگانے کی کوئی فیس نہیں لی جائے گی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube