رمضان المبارک میں انجیر کے صحت بخش فوائد

May 13, 2019

عرب ممالک میں رمضان کا دسترخوان مشہور ڈش "الخشاف" سے خالی نہیں ہوتا، خشک میوہ جات سے تیار ہونے والی اس ڈش میں انجیر ایک مرکزی جزو کی حیثیت رکھتی ہے۔

انجیر کا روزانہ معتدل استعمال آپکا بلڈ پریشرکنٹرول میں رکھتا ہے، اِس کے علاوہ انجیر سے ہاضمے کا نظام بھی بہتر رہتا ہے جس سے وزن میں بے جا اضافہ بھی نہیں ہوتا اورآپ تندرست اورچاک وچوبند رہتے ہیں۔

خصوصاً رمضان میں اِس پھل کا استعمال آپ کو یقیناً صحت مند اور توانا رکھتا ہے، انجیر کے 7 صحت بخش فوائد جان کر آپ بھی پابندی کے ساتھ اس کو کھانا شروع کر دیں گے یہ فوائد درج ذیل ہیں

جلد کی دیکھ بھال

انجیر میں وٹامن"C" اور کیلشیم کی وافر مقدار ہونے کے سبب یہ آپ کی جلد کو نرمی اور فرحت بخشتی ہے۔ یہ عناصر اینٹی آکسیڈنٹس کے طور پر کام کرتے ہیں اور عمر کے بڑھنے کے ساتھ جلد میں جھریاں پڑنے سے روکتے ہیں۔ ساتھ ہی جلد کو جوان اور تر و تازہ رکھتے ہیں۔

ہڈیوں کی کثافت کا تحفظ

انجیر میں موجود مختلف نوعیت کے معدنیات انسانی ہڈیوں کی کثافت کو برقرار رکھتے ہیں۔ بالخصوص عمر بڑھنے کے ساتھ جب کہ اس دوران ہڈیوں سے معدنیات کی مقدار نکل جاتی ہے۔ اس کے نتیجے میں جوڑوں میں کمزوری آ جاتی ہے اور ہڈیوں کے بھربھرے پن میں مبتلا ہونے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔

فشار خون میں کمی

انجیر میں پوٹاشیم کی بڑی مقدار ہونے کے پیش نظر یہ فشار خون کو کم کرنے کے لیے مثالی آپشن ہے۔ پوٹاشیم خون کی شریانوں کو وسیع کرتا ہے۔ اس طرح یہ شریانوں اور رگوں پر دباؤ میں کمی لاتا ہے اور دل کی صحت کو تحفظ دیتا ہے۔ اسی واسطے بلند فشار خون کے مریضوں کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ رمضان افطار پر انجیر کا استعمال کریں تا کہ فشار خون کو کنٹرول کیا جا سکے۔

مدافعتی نظام کی مضبوطی

وٹامن"C" کو کسی بھی مدافعتی نظام کے لیے صحت کی کنجی شمار کیا جاتا ہے۔ یہ خون میں سفید خلیوں کی تخلیق کو متحرک کرتا ہے اور متعدد اور عجیب نوعیت کے امراض کے خلاف جسمانی مدافعت کو تقویت دیتا ہے۔ اسی طرح انجیر میں پائی جانے والے دیگر اینٹی آکسیڈنٹس بھی مدافعتی نظام کو تھکنے سے بچاتے ہیں۔

وزن میں کمی

انجیر میں بڑی مقدار میں ریشے کی موجودگی سیراب ہونے کا احساس بڑھاتی ہے۔ اس طرح انسان زیادہ کھانے یا غیر ضروری ہلکے پھلکے کھانوں کے تناول سے دور رہتا ہے۔ البتہ انجیر کھانے میں اعتدال کا راستہ اپنانا چاہیے تا کہ حراروں اور شوگر کی مقدار میں زیادتی نہ ہو۔

خون میں شوگر کا کنٹرول

اگرچہ انجیر میں موجود ریشہ انسانی جسم میں گلوکوز اور انسولین کی مقدار کو منظم رکھنے پر قادر ہے تاہم انجیر میں پائی جانے والی قدرتی شوگر کے بلند ارتکاز کا خیال رکھا جانا چاہیے۔ بالخصوص اگر آپ ذیابیطس کے مرض میں مبتلا ہیں۔

خراب کولیسٹرول سے چھٹکارہ

یہ بات ثابت ہو چکی ہے کہ غذائی ریشہ انسانی جسم میں خراب کولیسٹرول پر قابو پاتا ہے۔ اس طرح انسان امراض قلب اور شریانوں کی بندش سے محفوظ رہتا ہے۔