شدید سردی میں ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھ جاتا ہے،ماہرین امراض قلب

January 28, 2019

ماہرین امراض قلب کے مطابق شدید سردی میں امراض قلب کے مریضوں کو زیادہ احتیاط کرنے کی ضرورت ہے۔ شدید سردی کے باعث دل کی بیماری میں مبتلا افراد مشکلات کا شکار ہوسکتے ہیں۔ ماہرین امراض قلب  کا کہنا ہے کہ شدید سردی میں بالخصوص رات کے اوقات میں امراض قلب میں مبتلا افراد میں ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھ جاتا ہے ۔

 ماہرین امراض قلب  بتاتے ہیں کہ دل کے امراض میں مبتلا زیادہ افراد رات اور صبح کے اوقات میں موت کا شکار ہوتے ہیں۔سخت سردی میں دل کی بیماری میں مبتلا افراد کو اپنے معالج سے چیک اپ ضرور کرانا چاہئے اور جن احتیاطی تدابیر کی ہدایت ڈاکٹر کرے ان پر عمل کرنا ضروری ہے، سرد موسم میں زیادہ پسینہ، گردن، بازوں، جبڑے، کندھوں میں درد، سانس لینے میں مشکلات اور چھاتی میں درد کو معمولی نہ سمجھا جائے کیونکہ یہ تمام دل کے دورہ کی علامات ہیں۔

زیادہ عمر کے افراد جن میں کولیسٹرول زیادہ ہو، ذیابیطس میں مبتلا افراد اور تمباکو نوشی کرنے والے افراد میں ہارٹ اٹیک کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے۔ایسے  مریضوں کو مشورہ ہے کہ وہ سخت سرد موسم میں شام اور رات کے اوقات میں گھر کے اندر رہیں، کھانے پینے کی چیزوں میں احتیاط برتیں تاکہ کسی بھی قسم کی دشواری سے بچ سکیں۔