چترال میں خودکشیوں کی وجوہات سامنے آگئیں

Samaa Web Desk
September 12, 2018

خیبر پختونخوا کے محکمہ صحت نے ضلع چترال میں خودکشی کے واقعات کی وجوہات کا کھوج لگالیا۔

محکمہ صحت کی جانب سے قائم کردہ کمیٹی نے چترال میں تحقیقات کے بعد رپورٹ تیار کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ خودکشی کے زیادہ تر واقعات کے پیچھے خلاف مرضی شادی، گھریلو مسائل اور امتحانات میں کم نمبر آنا شامل ہیں۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ خودکشیوں کی سب سے بڑی وجہ چترال میں ماہرین نفسیات کی عدم موجودگی ہے۔

واضح رہے کہ چترال میں رواں سال خودکشی کے 26 واقعات رپورٹ ہوئے ہیں جن میں شادی شدہ خواتین، لڑکیاں اور طلبہ و طالبات نے اپنی زندگی کا خاتمہ کیا۔

خودکشی کے بڑھتے واقعات کے اسباب جاننے اور اس کی روک تھام کیلئے خیبر پختونخوا کے محکمہ صحت نے ایک کمیٹی تشکیل دی تھی۔