پاکستان میں لال انگور کھانے والے ہوشیار باش

September 11, 2018

پاکستان کے دورے پر آئیں ایک برطانوی سیاح کا کہنا ہے کہ اگر آپ میرپور خاص میں لال رنگ کے انگور کھانا چاہتے ہیں تو پہلے اچھی طرح تصدیق کرلیں کہ کیا یہ واقعی لال انگور ہیں؟۔

پاکستانی نژاد برطانوی سیاح کو انگور کی جانچ پڑتال اور تحقیقات کا خیال اس وقت آیا، جب ان کی ایک رشتے دار یہ لال رنگ کے انگور کھانے سے علیل ہوگئیں، جس کے بعد انہوں نے اپنی دوست کے ہمراہ مارکیٹ میں کثیر تعداد میں موجود انگوروں کو بخور دیکھنا شروع کیا۔

 

ایسے ہی سروے کرتیں لیلی خان جب ایک ٹھیلے والے کے قریب جا کر رکیں تو انہیں ٹھیلے والا پھل بیچتے ہوئے نظر نہ آیا، بلکہ وہ ٹھیلے کے عقب میں زمین پر بیٹھا سفید اور ہرے انگوروں پر لال پینٹ کا تڑکا لگا رہا تھا۔

 

لیلی یہ دیکھ کر حیران رہ گئیں کہ کیسے یہ پھل فروش یا یوں کہیں پھل کیساتھ پینٹ فروش لوگوں کی آنکھ میں دھول جھونک رہا ہے۔ لڑکیوں نے فورا اس منظر کو اپنے کیمرے میں قید کرلیا، کیمرے کی کھٹک کی سی آواز پر ایک دم پھل والا مڑا اور لڑکیوں کو دیکھا تاہم اس کے چہرے پر شرمندگی کے کوئی آثار نمودار نہ ہوئے اور وہ اپنے کام میں مگن رہا۔

 

تاہم سماجی رابطے کی سائٹ کا سہارا لیتے ہوئے لیلی خان نے صرف میرپور ہی نہیں بلکہ ہر جگہ ان لال رنگ کء انگوروں کو کھانے سے پہلے چیک کرنے کی اپیل کی ہے، تاکہ آپ لوگ لیلی کی رشتے دار خاتون کی طرح اپنی صحت خراب نہ کرسکیں اور ایسے جعلی پھل فروشوں کے ہاتھوں بے وقوف بننے سے بچ سکیں۔