یورپی ممالک کا شورمے کی فروخت پر پابندی لگانے کا فیصلہ

December 6, 2017

لندن / برسلز / برلن : ترکی اور دیگر عرب ممالک کی مشہور سوغات اور کھانا شوراما شاید آنے والے دنوں میں یورپ میں دستیاب نہ ہو، یورپی ماہرین صحت نے اس لذیز کھانے کی غذائیت اور تیاری پر سوالات کھڑے کرتے ہوئے اسے مضر صحت قرار دے دیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے مرر ٹو وی کے مطابق یورپی ممالک نے شورامے پر پابندی عائد کرنے پر غور شروع کردیا ہے۔

ترک شوارما‘جو بیشتر یورپی ملکوں بالخصوص جرمنی کے علاوہ برطانیہ میں فاسٹ فوڈ ریسٹوراٹز پر بہ کثرت دستیاب ہے لیکن یورپ کے طبی اعتبار سے ترک شوارما کئی خطرناک جسمانی عوارض کا موجب بن رہا ہے۔

یورپی ماہرین صحت کے مطابق شوارمے سے امراض قلب، خون کی شریانوں کے مسائل اور شریانوں کے سکڑنے جیسے عوارض شامل ہیں۔ ماہرین کا مزید کہنا ہے کہ ترک شوارما میں فاسفیٹ کی مقدار یورپی ملکوں کے صحت سے متعلق قوانین کی دی گئی اجازت سے زیادہ پائی جاتی ہے۔

دوسری جانب شوارما پرپا بندی کے اطلاعات پر شوارما کے میدان میں کام کرنے والے افراد میں غم وغصہ اور ایک نئی بحث ضرور چھڑ گئی ہے۔ سماء

Email This Post
 

:ٹیگز

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.