مفت علاج معالجے کی سہولیات کا آغاز

By: Samaa Web Desk
February 22, 2017

C5SLVYQWQAAgQRw

پشاور: خیبر پختونخوا میں مستحق لوگوں کو علاج معالجے کی مفت سہولیات کی فراہمی کے لئے موجودہ صوبائی حکومت کی طرف سے شروع کردہ ہیلتھ انشورنس سکیم”صحت انصاف کارڈ“ کے تحت اب نجی شعبے کے ہسپتالوں میں بھی لوگوں کو مفت علاج کی فراہمی کے عمل کا آغاز ہو گیا ہے۔

پشاور میں قائم نجی شعبے کے بڑے ہسپتال رحمان میڈیکل انسٹیٹیوٹ حیات آباد میں (آر ایم آئی) میں اس سکیم کے تحت مفت علاج معالجے کی سہولیات کا باقاعدہ آغاز ہو گیا ہے۔سینئر صوبائی وزیر صحت شہرام ترکئی نے بدھ کے روز مذکورہ ہسپتال میں منعقد ایک تقریب میں اس سہولت کا افتتاح کر دیا۔

صوبائی حکومت کی اس سکیم کے تحت مذکورہ ہسپتال میں مریضوں کو آرتھو پیڈک، کارڈیالوجی، گائنی، پتھالوجی، ریڈیالوجی اور انکالوجی سمیت دیگر شعبوں میں بہترین طبی سہولیات و خدمات فراہم کی جائیں گی۔

اس سلسلے میں منعقدہ تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر نے صحت انصاف کارڈ کو صوبائی حکومت کی طرف سے صوبے کے غریب عوام کی فلاح و بہبود کا ایک بہت بڑا اور مثالی منصوبہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ صحت انصاف کارڈ ملک کی تاریخ کا وہ پہلا منصوبہ ہے جس سے غریب لوگوں کی زندگیاں تبدیل ہو جائیں گی اور اصل تبدیلی بھی یہی ہے کہ نچلے طبقے کے لوگوں کی زندگیوں میں مثبت تبدیلیاں آئیں۔

دریں اثناءصوبائی وزیر نے صحت انصاف کارڈ سکیم کے تحت ہسپتال میں زیر علاج مریضوں اور ان کے لواحقین سے بھی ملاقات کی جنہوں نے علاج معالجے کی بہترین سہولیات کی مفت فراہمی پر صوبائی حکومت کا شکریہ ادا کیا اور اس سکیم کو صحیح معنوں میں غریب لوگوں کی فلاح کا منصوبہ قرار دیا۔ سماء

Email This Post
 
 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.