Wednesday, October 20, 2021  | 13 Rabiulawal, 1443

ایک اور رومانس ہوجائے

SAMAA | - Posted: Sep 25, 2021 | Last Updated: 4 weeks ago
Posted: Sep 25, 2021 | Last Updated: 4 weeks ago

ماہرہ خان نے اپنے مقبول ترین ڈرامے ‘ہمسفر’ کے 10 سال مکمل ہونے پر یادیں تازہ کرتے ہوئے ٹوئٹر پرلائیو سیشن کا اہتمام کیا جس میں ان کے مداحوں نے دلچسپ سوالات و تبصروں کے ڈھیرلگادیے۔

اداکارہ نے اپنے شعبے سے لیکر ذاتی زندگی تک پوچھے گئے سوالات کے جوابات خوش دلی سے دیے ۔

کیا آپ کو ماہرہ کا کردار خرد یاد ہے؟

ایک صارف نے پوچھا کہ وہ کون سی ایسی چیز ہے جسے ناپسند ہونے کے باوجود کرتی ہیں؟ جواب میں ماہرہ نے سچ بولتے ہوئے کہا کہ ‘ مجھے جھوٹ بولنا پسند نہیں لیکن بعض اوقات انٹرویو میں بولنا پڑتا ہے’۔

تب سے اب تک خود میں آنے والی تبدیلی سے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب میں ماہرہ کا کہنا تھا کہ، ‘ مجھ میں بہت زیادہ تبدیلی نہیں آئی، اور میرا نہیں خیال کہ وہ کوئی اچھی چیز ہے’۔

بنگلہ دیش سے ماہرہ کی مداح خاتون نے ڈرامہ ‘ہم کہاں کے سچے تھے’ کیلئے پسندیدگی کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ یہاں آپ کے بہت مداح ہیں، کیا کرونا کے بعد بنگلہ دیش آنے کا ارادہ ہے ؟ جواب میں ماہرہ نے امید ظاہر کرتے ہوئے لکھا کپ ‘انشاء اللہ، جلد ایسا ہوگا’۔

ماہرہ پر بھرپوراعتماد کا اظہارکرتے ہوئے ان کے مداح طالبعلم نے پوچھا کہ ‘ کل میرا امتحان ہے اورکوئی تیاری نہیں، مجھے چھٹی کرنی چاہیے یا جانا چاہیے؟’۔ اداکارہ نے اس انوکھے سوال پر مشورہ دیا کہ ‘امتحان دینے جائیں’۔

ہمایوں سعید اور ماہرہ کی ایک مشترکہ پرستارنے دکھی دل کے ساتھ سوال اٹھایا کہ دونوں کب ایک ساتھ کام کریں گے، یا ہرسال کی طرح اس بار بھی ‘جیتو پاکستان’ کا انتظارکرنا پڑے گا؟۔ ماہرہ نے ہمایوں سعید کو ٹیگ کرتے ہوئے لکھا ، ‘ ہم کریں گے، ضرور کریں گے’۔

ماہرہ نے ڈرامے کی مصنفہ سے ایسا ہی ایک اوربھرپورکردارلکھنے کی فرمائش بھی کرڈالی، فرحت اشتیاق کی ٹویٹ پر ماہرہ نے لکھا، ‘فرحت ۔۔ آپ نے خرد کا کردار بہت خوبصورتی سے لکھا تھا، ایک اور رومانس ہوجائے’۔

اس سے قبل گزشتہ سال ڈرامہ نشرکیے جانے کے 9 سال پورے ہونے پر ماہرہ نے بہت سے یادگار مناظر کی ویڈیوزشیئر کرتے ہوئے انسٹاپوسٹ میں لکھا تھا، ‘اب کیا کہنا باقی ہے جو پہلے نہیں کہا گیا؟ ہوسکتا ہے کہ ہمسفر کے بارے میں بات کرنے کیلئے ہمیشہ ہی کچھ باقی ہو’۔

اداکارہ کا کہنا تھا کہ ، ‘خرد اب تک کا میرا سب سے اہم کردار ہے۔ وہ انتہائی شدت سے پیارکرتی تھی، پورے دل سے عطا کرتی تھی اور جب بات اس کی عزت نفس پرآئی تو وہ اسے اپنے دل کے سب سے زیادہ قریب رکھتی ہے، کیا خاتون تھی’۔

فرحت اشتیاق کے ناول کی ڈرامائی تشکیل پر مبنی یہ ڈرامہ سال 2011 میں نشر کیاگیا تھا جس میں ماہرہ کے مقابل فواد خان نے مرکزی کردارادا کیا تھا۔

نصیرترابی نے ‘وہ ہمسفر تھا’ کس کیلئے لکھی تھی

ڈرامے کے ڈائریکٹر سرمد کھوسٹ تھے جبکہ دیگر کاسٹ میں عتیقہ اوڈھو، نوین وقار، نورالحسن، بہروز سبزواری اور حنا خواجہ بیات شامل تھے۔

اس ڈرامے سے شہرت کی بلندیوں کو چھونے والی ماہرہ نے صارفین کی جانب سے بیحد پسندیدگی کے علاوہ بہترین اداکاری پرکئی ایوارڈز بھی حاصل کیے تھے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube