Thursday, September 16, 2021  | 8 Safar, 1443

ہالی ووڈ میں مسلمانوں کی نمائندگی کیلئے رزاحمد کا بڑا قدم

SAMAA | - Posted: Jun 11, 2021 | Last Updated: 3 months ago
Posted: Jun 11, 2021 | Last Updated: 3 months ago

فائل فوٹو

پاکستانی نژاد برطانوی اداکاررز احمد نے شکاگوسے تعلق رکھنے والے نمائندہ گروپ کے ساتھ مل کر مسلمان فلم میکرز کے لئے25 ہزار ڈالرز کی فیلو شپس کا اعلان کیا ہے۔

دی ہالی ووڈ رپورٹر کے مطابق رز نے مسلمانوں کو اسکرین پر اپنی صلاحیتیں دکھانے میں مدد کیلئے پلرفنڈ اور فورڈ فاؤنڈیشن کے ساتھ اشتراک کیا ہے۔

اداکار نے اپنی ٹویٹ میں لکھا ” جب فلموں میں مسلمانوں کی بات آتی ہے تو ہم یا تو غائب ہوجاتے ہیں یا ولن بن جاتے ہیں”۔

پلرفنڈ اورفورڈ فاؤنڈیشن کی جانب سے ” مسنگ میلانڈ: دی رئیلٹی آف مسلمزان پاپولرگلوبل موویز” کے عنوان سے کی جانب سے کی جانے والی اسٹڈی میں ہالی ووڈ میں مسلمانوں کی پسماندگی کی نشاندہی کی گئی تھی۔

فاونڈیشن کی اسٹڈی کے مطابق 8 ہزار 965 بولنے والے کرداروں میں سے مسلمانوں نے صرف ایک اعشاریہ 65 ادا کیے۔ مسلمان خواتین کی نمائندگی بھی انتہائی کم ہے جو مردوں کے تناسب سے 175 میں سے صرف ایک ہے۔

اس کے علاوہ ہالی ووڈ کی 200 فلموں میں سے 181 میں مسلمان کردار ہی نہیں تھے۔

ہالی ووڈ میں مسلمانوں کی منفی اور پرتشدد عکاسی کی جاتی رہی ہے ۔ تقریبا ایک تہائی مسلم کرداروں کو پرتشدد دکھایا گیا جبکہ نصف سے زائد تشدد کا شکار ہیں۔ صرف ایک مسلمان کردارمعذوری کے ساتھ پایا گیا تھا۔

پِلرز آرٹسٹ فیلوشپ ایڈوائزری بورڈ میں خدمات انجام دینے والے ارکان میں رز کے علاوہ 8 دیگر افراد میں امریکی کامیڈین حسن منہاج بھی شامل ہیں۔

جب رزاحمد نےآسکرکارپٹ پراہلیہ کے بال سنوارے

برطانیہ سے تعلق رکھنے والے 38 سالہ رزاحمد وہ پہلے مسلمان اداکار ہیں جنہیں فلم ” ساؤنڈ آف میٹل” میں مرکزی کردار کیلئے فلمی دنیا کے معتبرترین اکیڈمی ایوارڈزکیلئے نامزد کیا گیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube