Wednesday, January 19, 2022  | 15 Jamadilakhir, 1443

ڈرامہ’میرے پاس تم ہو‘آخری قسط میں کیا ہوا ؟

SAMAA | - Posted: Jan 25, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 25, 2020 | Last Updated: 2 years ago

پاکستانی ڈرامہ انڈسٹری میں مقبولیت کی نئی تاریخ رقم کرنے والے ڈرامے ’ میرے پاس تم ہو ‘ کی آخری قسط کا ناظرین کو دو ہفتے سے بے پناہ انتظار تھا تاہم آج ڈرامے کے اختتام کے ساتھ ان کا انتظار ختم ہوگیا۔

آخری قسط کی ابتداء میں ڈرامہ کی اب تک نشر ہونے والی 22 قسطوں کا مختصر احوال دوبارہ پیش کیا گیا۔ یہ ان لوگوں کیلئے بہت اچھا تھا جنہوں نے ڈرامہ اب تک نہیں دیکھا تھا کیونکہ مختصر حصے میں پچھلی تمام کہانی اور دلچسپ ڈائیلاگ کو دوبارہ دکھا دیا گیا تاہم جن لوگوں نے ڈرامہ کے آخری قسط کا ٹیزر پہلے دیکھ لیا تھا ان کے لیے دو یا چار نئے سین سے زیادہ کچھ نہیں تھا ۔

آخری قسط میں مونٹی کی دانش سے ملاقات ہوتی اور وہ اسے بتاتا ہے کہ اسے مہوش نے بھیجا ہے اور اس سے ملنا چاہتی ہے تاہم خوشگوار موڈ میں ہونے والی یہ ملاقات ختم ہوتی ہے اور دانش ساحل سمندر پر بیٹھا اپنے دوست سلمان سے مونٹی کے ساتھ ہونے والی ملاقات کا احوال بتاتا ہے تو سلمان کہتا ہے ’وہاں اکیلے مت جانا‘ ۔

اگلے سین میں دانش اپنے گھر میں تیار ہورہا ہوتا ہے تو رومی کے پوچھنے پر دانش بتاتا ہے کہ وہ مہوش سے ملنے جارہا ہے لیکن وہ رومی سے کہتا ہے ’مجھے ڈر لگتا کہ وہاں جاؤں گا تو واپس نہیں آؤں گا ‘یہ ڈئیلاگ اس قبل کئی بار دانش کہہ چکا تھا اس لیے یہ دیکھنے والوں کیلئے کچھ نیا نہیں تھا ۔

رومی اپنے والد سے کہتا ہے کہ اب ہانیہ ٹیچر کا کیا ہوگا جس پر دانش کہتا ہے ’مردوں کے بارے میں بڑا مشہور ہے کہ وہ بے وفا ہوتے ہیں ‘یہ سین پہلے ہی ٹیزر میں دکھایا جاچکا تھا ۔

دانش کے جاتے جاتے رومی کہتا ہے کہ صاف لگ رہا ہے آپ کے جانے کا دل نہیں لیکن ’ماما میری کمزوری ہیں‘۔ یہ سین دیکھ کر ہی اندازہ ہوگیا تھا کہ دانش مرنے والا ہے وہ ایسے انداز میں اپنے بیٹے کو ہاتھ ہلا کر’بائے‘ کرتا ہے جیسا اکثر ہی فلموں میں دکھایا جاتا ہے ۔

ڈرامہ کے کردار شہوار اور ماہم کا اختتام کچھ یوں ہوا کہ دونوں کی راہیں جدا ہوجاتی ہیں شہوار اپنی بیوی ماہم کا گھر چھوڑ کر چلا جاتا ہے اس وقت ماہم کے دل میں رحم آجاتا ہے تاہم اس سین میں شہوار کی جانب سے دو بڑے ڈائیلاگ بولے جاتے ہیں شہوار کہتا ہے کہ ’کاش میں کہہ سکوں کہ دغا کرنے والے مرد کے پاس طلاق کا اختیار نہیں ہونا چاہیئے‘۔

ماہم کی جانب سے مہوش کو برباد کرنے کے جملے پر شہوار نے کہا کہ’ایسی عورت کو مرد بربار نہیں کرتا اس کو اس کی آنکھوں کے بڑے خواب برباد کردیتے ہیں وہ یہ نہیں دیکھتی کہ اسے کیا ملا ہے وہ دیکھتی ہے دوسروں کو کیا ملا ہے‘۔

یہاں تک تو ڈرامہ سنسی خیز رہا تاہم دانش بلآخر مہوش کے گھر جاتا ہے کئی پرانی باتیں دہرانے اور یاد کرتے مہوش کے دروازے پر اسے ہاٹ اٹیک ہوجاتا ہے اور ایسی اوور ایکٹنگ کرتا ہے کہ اب تک تمام سین پر جہاں کی دانش کے کردار کی تعریف کی گئی وہیں غصہ آنے لگتا ہے۔ جیسا کہ دانش کے آنے سے پہلے مہوش ، مونٹی سے کہتی ہے کہ وہ اپنی اہلیہ سے کہے کہ’ ایسا وظیفہ پڑھے کہ وہ جانے نہ پائے ‘ تو بھائی کچھ ایسا ہی ہوا دانش واپس نہیں گیا چلا ہی گیا ۔

آخری قسط میں ہانیہ کا کردار شروع ہوتے ہی ختم ہوگیا دانش کے مرنے کے بعد رومی ، ہانیہ کی انگوٹھی اسے واپس کردیتا ہے اور کہتا ہے پاپا نے کہا ہے کہ وہ ’ خوابوں میں آئیں گے ‘۔

تمام تصاویر اسکرین شارٹس ہیں 

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube