Sunday, September 20, 2020  | 1 Safar, 1442
ہوم   > اینٹرٹینمنٹ

مودی کی زندگی پر مبنی فلم کی ریلیز اعتراضات کے بعد روک دی گئی

SAMAA | - Posted: Apr 7, 2019 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Apr 7, 2019 | Last Updated: 1 year ago

بھارتی وزیراعظم مودی کی زندگی پر مبنی فلم کی ریلیز اپوزیشن جماعتوں کے اعتراضات کے بعد روک دی گئی۔

بھارتی وزیرِ اعظم نریندر مودی کی زندگی پر بنی فلم اپنی طے شدہ تاریخ5 اپریل کو سنیماگھروں میں ریلیز نہیں ہوسکی۔

بھارت میں لوک سبھا انتخابات سے چند روز پہلے فلم کی ریلیز پر اپوزیشن جماعتوں نے الیکشن کمیشن میں شکایت کی تھی کہ انتخابات سے ایک ہفتے پہلے فلم کی ریلیز انتخابی قوانین کی خلاف ورزی میں آتی ہے۔

فلم کے پروڈیوسر سندیپ سنگھ نے جمعرات کوٹویٹ کی کہ ‘پی ایم نریندر مودی‘ فلم 5 اپریل کو ریلیز نہیں ہوگی جبکہ الیکشن کمیشن کی ہدایت پر سینٹرل بورڈ آف فلم سرٹیفیکیشن نے فلم کی ریلیز کی اجازت نہیں دی۔

اپوزیشن جماعتوں کے مطابق فلم کا انتخابات سے قبل ریلیز ہونا نریندر مودی کی جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کو غیر منصفانہ فائدہ پہنچائے گی۔

بھارتیوں نے مذاق اڑا کر مودی جی کی لٹیا ڈبو دی

ابتدائی طور پر ’پی ایم نریندرمودی‘ فلم کی ریلیز 12 اپریل کو طے تھی لیکن انتخابات سے پہلے اسے ریلیز کرنے کے لئے تاریخ آگے بڑھا کر 5اپریل کر دی گئی تھی۔

پی ایم نریندر مودی‘ میں بالی ووڈ اداکار وویک اوبرائے نے مرکزی کردار اداکیا ہے۔ فلم میں مودی کی زندگی کے مختلف ادوار، ابتدائی برسوں کا احوال اور ہندوستانی ریاست گجرات کے وزیرِاعلیٰ کے طور پر ان کے زندگی کے حالات کو دکھایا گیا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube