اسلام قبول کرنے کے بعد زندگی یکسر بدل گئی، اے آر رحمان

November 6, 2018

بالی ووڈ کے آسکر ایوارڈ یافتہ موسیقار اے آر رحمان نے انکشاف کیا ہے کہ اسلام قبول کرنے سے پہلے ان کی زندگی میں ایسا وقت بھی آیا تھا جب وہ روزانہ خودکشی کے بارے میں سوچتے تھے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق گزشتہ روز اپنی سوانح حیات نوٹس آف اے ڈریم کی لانچنگتقریب کے دوراناے آر رحمان نے اپنی زندگی کے کئی اہم رازوں سے پردہ اٹھاتے ہوئے کہا کہ ان کی زندگی میں ایسا دور بھی آیا تھا جب انہیں محسوس ہوتا تھا کہ وہ ناکام ہوگئے ہیں اور روزانہ خودکشی کے بارے میں سوچتے تھے۔

انہوں نے کہا کہ 12 سے 22 سال کی عمر تک اپنی زندگی سے تنگ آچکا تھا تاہم بطور موسیقار اپنا کیریئر شروع کرنے سے قبل ہی فیملی کے ساتھ دائرہ اسلام میں داخل ہوگیا اور اپنی پچھلی زندگی کے ساتھ اپنے نام دلیپ کمار کو بھی اللہ رکھا رحمان کے ساتھ تبدیل کیا۔

انہوں نے کہا مجھے اپنا پرانا نام دلیپ کمار بالکل بھی پسند نہیں تھا، پتہ نہیں کیوں مجھے اس نام سے نفرت تھی مجھے لگتا تھا یہ نام میری شخصیت کے مطابق نہیں ہے، میں کوئی اور شخصیت بننا چاہتا تھا اور اپنی پچھلی زندگی سے چھٹکارہ حاصل کرنا چاہتا تھا۔

اے آر رحمان نے دائرہ اسلام میں داخل ہونے کے بعد 1992 میں فلم روجا کے ذریعے بطور موسیقار کیریئر کا آغاز کیا اور شہرت کی بلندیوں تک پہنچ گئے اس دوران انہوں نے آسکر ایوارڈ سمیت کئی ملکی اور بین الاقوامی ایوارڈ بھی اپنے نام کئے۔