علی ظفر کی جانب سے بھیجا گیا نوٹس میشاشفيع کو موصول

Samaa Web Desk
April 25, 2018

کراچی : گلوکار علی ظفر کی جانب سے بھیجا گیا نوٹس میشاشفیع کومل گیا، بیرسٹر احمد کا کہنا ہے کہ نوٹس کا جائزہ لے رہے ہیں۔

 معروف اداکار و گلوکار علی ظفر نے اداکارہ اور سنگر میشا شفیع کواپنے وکلاء کے ذریعے 10کروڑ روپے کا قانونی نوٹس بھجوایا تھا، جس میں کہا گیا تھا کہ میشا شفیع نے ہراساں کرنے کا جھوٹا دعویٰ کیا ہے۔

نوٹس میں یہ بھی بیان کہا گیا ہے کہ میشا شفیع 14روز میں میڈیا پر آکر معافی مانگیں ورنہ ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا جائے گا۔

سماء سے گفتگو میں گلوکارہ فریحہ الطاف کا کہنا تھا کہ سب اہم بات یہ ہے کہ جنسی ہراسگی ہے کیا کسی کو یہ پتا ہی نہیں ہے ، اس حوالے سے کئی سال پہلے بھی ایک بل پاس کیا جاچکا ہے لیکن لوگوں کو اس بات کا علم ہی نہیں ہے کہ کون سی چیز قانونی طور پر جنسی ہراسگی کے زمرے میں آتی ہے۔

علی ظفر کی جانب سے 10 کروڑ روپے ہرجانے کے نوٹس کے جواب میں میشا شفیع نے بھی قانونی ماہرین کی خدمات حاصل کرلیں۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں میشا شفیع نے لکھا تھا کہ ’’ بیرسٹر پینسوٹا اور قانونی ماہر کے طور پرنگہت داد جنسی ہراسانی کے حوالے سے علی ظفر اور میرے معاملات کو دیکھیں گے۔ میڈیا سے درخواست ہے کہ کسی بھی اپ ڈیٹ کے حوالے سے ان دونوں سے رابطہ کریں۔

وکیل میشا شفیع بیرسٹراحمد نے بتایا ہے کہ علی ظفر کی جانب سے بھیجا گیا نوٹس مل گیا، نوٹس کا جائزہ لے رہے ہیں،وکیل کا کہنا تھا کہ میشا شفیع کا ٹوئٹ الزام نہیں حقیقت ہے۔