Saturday, November 27, 2021  | 21 Rabiulakhir, 1443

ڈالر کی قیمت میں مسلسل کمی

SAMAA | - Posted: Oct 28, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Oct 28, 2021 | Last Updated: 1 month ago
AFGHANISTAN-ECONOMY

فوٹو: اے ایف پی

سعودی عرب سے قرض پیکج منظوری کے باعث پاکستانی روپے پر دباو میں بدھ سے کمی آرہی ہے اور ڈالر کے مقابلے میں پاکستانی کرنسی کی  قدر میں غیر معمولی گراوٹ کا سلسلہ بھی رک گیا ہے۔

کاروباری دن کے دوران جمعرات 28اکتوبر کو اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت میں ایک روپے کی کمی کے بعد 173.50 روپے اور انٹربینک مارکیٹ میں قیمت میں 52 پیسے کمی کے بعد ڈالر 172.26 روپے پر ٹریڈ کر رہا ہے۔

بدھ کو بھی انٹر بینک میں ڈالر کی قدر میں 2.49 روپے جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں 1.70روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی تھی۔

معاشی ماہرین کا کہنا ہے کہ عالمی مارکیٹ میں خام تیل سمیت دیگر کموڈٹیز کے نرخ بڑھنے کے باعث درآمدات کا حجم بڑھ گیا ہے جس کے نتیجے میں تجارتی و کرنٹ خسارے بھی اضافہ ہو رہا ہے اور خسارے پر قابو پانے کے لیے آئی ایم ایف سے مذاکرات ہو رہے ہیں۔

آئی ایم ایف سے جاری مذاکرات میں تاخیر کے باعث زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی اور روپے کی قدر پر دباؤ کی صورت میں سامنے آرہا تھا لیکن سعودی عرب کی جانب سے 4.2ارب ڈالر کے امدادی پیکج کی وجہ سے صورتحال میں کافی بہتری آئی ہے اور پاکستانی روپے پر دباو میں بھی کافی کمی آگئی ہے۔

دوسری جانب وفاقی مشیر خزانہ شوکت ترین نے آئی ایم ایف سے مذاکرات میں ایک دو روز میں پیش رفت کا امکان ظاہر کیا ہے، اگر آئی ایم ایف سے قرض پروگرام بھی بحال ہوجاتا ہے تو پاکستانی روپے پر دباؤ میں مزید کمی آئے گی۔

ماہرین کا یہ بھی کہنا ہے کہ آئی ایم ایف سے قرض پروگرام کی بحالی کے بعد حکومت انٹرنیشنل مارکیٹ میں 3.4 ارب ڈالر کے سکوک اور یورو بانڈز بھی فروخت کرنے جارہی ہے جس کے نتیجے میں صورتحال میں مزید بہتری کی توقع ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube