Friday, December 3, 2021  | 27 Rabiulakhir, 1443

آئی ایم ایف سے مذاکرات، شوکت ترین کی واشنگٹن واپسی

SAMAA | - Posted: Oct 20, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Oct 20, 2021 | Last Updated: 1 month ago

Shaukat Tarin

وزیراعظم کے مشیر برائے خزانہ شوکت ترین مذاکرات میں شامل ہونے کے لیے منگل کو نیویارک سے واشنگٹن واپس پہنچ گئے۔

پاکستانی وفد اور آئی ایم ایف کی ٹیم کے مابین مذاکرات جاری ہیں، مشیر خزانہ شوکت ترین واشنگٹن ڈی سی دوبارہ پہنچ گئے جس کے بعد آئی ایم ایف پروگرام کے تحت قرض کی اگلی قسط کے لیے چھٹا جائزہ مکمل کرنے کے لیے بحث دوبارہ شروع ہوگی۔

مذاکرات 15 اکتوبر کو مکمل ہونے تھے لیکن ڈیڈ لاک کے ساتھ مقررہ وقت ختم ہوگیا تھا اور پاکستان کے مشیر خزانہ نے واشنگٹن میں اپنے قیام کو بڑھایا اور مذاکرات دوبارہ شروع ہوئے۔

  شوکت ترین اور گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر دیگر مصروفیات کے لیے نیویارک روانہ ہوئے تھے۔ ان کے ترجمان مزمل اسلم نے منگل کو ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ مشیر خزانہ اب مذاکرات میں شامل ہونے کے لیے واشنگٹن واپس آگئے ہیں۔ انہوں نے ایک بار پھر اس بات کی تردید کی کہ مذاکرات ناکام ہوئے۔

 شوکت ترین گزشتہ ہفتے جب واشنگٹن پہنچے تھے تب وہ وفاقی وزیر خزانہ تھے، صدارتی آرڈیننس کے تحت ان کی چھ ماہ کی مدت ختم ہوگئی تھی۔

وزیراعظم عمران خان نے اپریل2021 میں آئین کے تحت شوکت ترین کو 6 ماہ کے لیے وفاقی وزیر خزانہ  بنایا تھا لیکن چوں کہ شوکت ترین اس دوران الیکشن کے ذریعے اسمبلی یا سینیٹ کا حصہ نہیں بن سکے اس  لیے ان سے وزارت واپس لے کر مشیر کے منصب پر فائز کیا گیا۔

  گزشتہ ہفتے یہ بات سامنے آئی کہ آئی ایم ایف اور پاکستانی وفد میں اہم تخمینوں اور قیمتوں میں اضافے پر اختلاف ہے اور آئی ایم ایف نے پیٹرولیم کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے بجلی کے نرخ میں مزید اضافے کا مطالبہ کیا ہے تاہم آئی ایم ایف حکام کا کہنا ہے کہ پیش رفت بہت اچھے طریقے سے ہو رہی ہے۔

مشیر خزانہ نے بھی مذکرات ناکام ہونے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ آئی ایم ایف سے مذاکرات مثبت انداز میں ہو رہے ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube