Monday, December 6, 2021  | 30 Rabiulakhir, 1443

پیٹرول کی قیمت میں تاریخی اضافہ

SAMAA | - Posted: Oct 16, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 16, 2021 | Last Updated: 2 months ago
Petrol

فوٹو: اے ایف پی

حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تاریخی اضافہ کرتے ہوئے پیٹرول 10.49 روپے جبکہ ہائی اسپیڈ ڈیزل 12.44 روپے فی لیٹر مہنگا کر دیا۔

اوگرا نے 14 اکتوبر کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری حکومت کو ارسال کی تھی، جس میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 10 روپے فی لیٹر تک اضافے کی سفارش کی تھی۔

نئی قیمتوں کا حتمی فیصلہ وزیراعظم عمران خان کو کرنا تھا، رد و بدل کی صورت میں نئی قیمتوں کا اطلاق 16 اکتوبر سے ہونا تھا۔ وزارت خزانہ نے وزیراعظم کی مشاورت سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں رد و بدل کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔

نوٹیفکیشن کے مطابق پیٹرول کی قیمت 10.49 روپے اضافے سے 137.79 روپے فی لیٹر ہوگئی جبکہ ہائی اسپیڈل ڈیزل کے نرخ بھی 12.44 روپے فی لیٹر بڑھ گئے، جس کے بعد اس کی نئی قیمت 134.48 روپے ہوگئی۔

وزارت خزانہ کے مطابق مٹی کا تیل 10.95 روپے اضافے کے بعد 110.26 روپے فی لیٹر اور لائٹ ڈیزل 8.84 روپے اضافے سے 108.35 روپے کا ہوگیا۔

نوٹیفکیشن کے مطابق نئی قیمتوں کا اطلاق 16 اکتوبر کی رات 12 بجے سے ہوگا۔

واضح رہے کہ یکم اکتوبر کو بھی حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات 8.82 روپے فی لیٹر تک مہنگی کی تھیں۔ چار ماہ میں پیٹرول کی مقامی قیمت میں 24 روپے 80 پیسے جبکہ ہائی اسپیڈ دیزل کی قمیت میں 20 روپے 49 پیسے تک اضافہ کیا جا چکا ہے۔

وزارت خزانہ کا کہنا ہے کہ خام تیل کی عالمی قیمت اکتوبر 2018 کے بعد 85 ڈالر فی بیرل کی بلند ترین سطح تک پہنچ چکی ہے. پیٹرولیم لیوی اور سیلز ٹیکس کم سے کم سطح پر رکھ کر عوام کو ریلیف دیا گیا ہے۔

بجلی کی قیمتوں میں اضافہ

حکومت نے بجلی کی قیمت میں 1.39 روپے فی یونٹ اضافے کی منظوری دیدی۔ وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر کا کہنا ہے کہ نئی قیمتوں کا اطلاق یکم نومبر سے ہوگا۔

وفاقی وزیر نے بتایا کہ اب ہم نے کافی بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت حاصل کرلی اس لئے چاہتے ہیں کہ طلب میں اضافہ ہو، ہم نے گزشتہ سال ایک انڈسٹریل پیکیج متعارف کرایا تھا جو کامیاب رہا، اور بجلی کی طلب میں 15 فیصد تک اضافہ ہوا۔

وفاقی وزیر نے بتایا کہ حکومت نے یکم نومبر سے بجلی کی قیمت میں 1.39 روپے فی یونٹ اضافے کا فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیپرا مارچ میں ساڑھے 3 روپے فی یونٹ بڑھانا چاہتا تھا، نیپرا کو بجلی کی قیمت 1 روپے 39 پیسے فی یونٹ بڑھانے کی تجویز دی ہے اس اضافے کا 200 یونٹ والے 40 فیصد صارفین پر اطلاق نہیں ہوگا جبکہ انڈسٹری کیلئے 12.96 روپے فی یونٹ برقرار رہے گی۔

آئی ایم ایف سے مذاکرات

وزیر خزانہ شوکت ترین پیر 11 اکتوبر کی رات قرض پروگرام کی بحالی کے لیے آئی ایم ایف کے ساتھ مذاکرات کے لیے امریکا روانہ ہوئے۔

مذاکرات کی کامیابی کی صورت میں ایک ارب ڈالر کی اگلی قسط ملنے کا امکان ہے۔ پاکستان کو 6ارب ڈالر کے قرض پروگرام میں سے 2ارب ڈالر پہلے ہی مل چکے ہیں۔

پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات 13اکتوبر سے شروع ہوئے جو تین دن تک جاری رہے۔

آئی ایم ایف کی شرائط

واضح رہے کہ آئی ایم ایف پروگرام کی بحالی کے لیے مزید ٹیکس لگانے سمیت کئی شرائط پیش کر چکا ہے، جمعہ 8 اکتوبر کو عالمی مالیاتی فنڈ نے پاکستان سے بجلی، انکم ٹیکس، سیلز ٹیکس اور اضافی ریگولیٹری عائد کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

آئی ایم ایف کا کہنا تھا کہ بجلی کی قیمت مزید ایک روپے 40 پیسے مہنگی کرے کیونکہ بجلی کی قیمت بڑھا کر ہی گردشی قرضے پر قابو پایا جاسکتا ہے۔

اس کے علاوہ انکم ٹیکس، سیلز ٹیکس اور ریگولیٹری ڈیوٹی حاصل کرنے کے لیے مزید اقدامات کرنا ہونگے تاکہ سالانہ محصولات کا ہدف 58 کھرب روپے سے بڑھ کر 63 کھرب روپے تک کیا جاسکے۔

آئی ایم ایف نے پاکستان سے مزید کہا کہ حکومت ہر طرح کی سبسڈی ختم کرئے یا اُس میں نمایاں کمی کرے اور ایف بی آر ریونیو اکٹھا کرنے کے حوالے سے مزید اقدامات کرے۔

آئی ایم ایف نے یہ بھی مطالبہ کیا ہے کہ نجکاری کے پروگرام کو تیز کیا جائے اور نقصان میں چلنے والی سرکاری کمپنیوں کی نیلامی کا ٹائم فریم فراہم کیا جائے۔

کچھ روز پہلے اسٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے شرح سود 7 فیصد سے بڑھا کر 7.25 فیصد کر دیا تھا جس پر وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا تھا کہ آئی ایم پروگرام میں جانے سے پالیسی ریٹ بڑھانا پڑا۔

گھی اور کوکنگ آئل کی قیمتوں میں اضافہ

یوٹیلٹی اسٹورز کارپوریشن نے جمعہ 15 اکتوبر مختلف برانڈز کا گھی اور کوکنگ آئل 40 روپے سے 109 روپے فی کلو تک مہنگا کردیا، ایک برانڈ کے 10 لیٹر گھی کی قیمت 1090 روپے بڑھ گئی جبکہ دوسرے برانڈ کے گھی کے 10 لیٹر ٹن پیک کی قیمت میں 475 روپے اضافہ کردیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق یوٹیلٹی اسٹورز پر ایک برانڈ کا کوکنگ آئل کا 5 کلو والا ڈبہ 1332 روپے سے 1795 روپے کا ہوگیا، دوسرے کوکنگ آئل کے 5 کلو والے ڈبے کی قیمت بھی 465 روپے بڑھ گئی۔

یوٹیلٹی اسٹورز کارپوریشن نے نئی قیمتوں کا نوٹیفکشن بھی جاری کردیا جس کا اطلاق فوری طور پر ہوگا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube