Tuesday, December 7, 2021  | 2 Jamadilawal, 1443

وزیراعظم نےبیرون ملک مقیم پاکستانیوں کیلئےروشن اپناگھراسکیم متعارف کروادی

SAMAA | - Posted: Aug 28, 2021 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Aug 28, 2021 | Last Updated: 3 months ago

بیرون ملک مقیم پاکستانی دور بیٹھے ٹرانزایکشن کرسکیں گے

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کو زیادہ درآمدات اورکم برآمدات کی وجہ سے ڈالر کے خسارے کو پورا کرنے کیلئے راستے تلاش کرنے کی ضرورت ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے جمعہ کو بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کے لیے روشن اپنا گھراسکیم کا افتتاح کردیا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کو زیادہ درآمدات اور کم برآمدات کی وجہ سے ڈالر کے خسارے کو پورا کرنے کیلئے راستے تلاش کرنے کی ضرورت ہے جس سے بیرون ملک سے پاکستان میں سرمایہ کاری کو راغب کیا جاسکتا ہے۔

 عمران خان نے کہا کہ روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ میں جمع رقم 2 ارب ڈالر سے تجاوز کر گئی ہے اور وہ یہ توقع کررہے ہیں کہ یہ نئی اسکیم اپنا گھر بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کیلئے بھی پاکستان میں ہاؤسنگ سیکٹر میں سرمایہ کاری کو راغب کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ آر ڈی اے نے بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو پاکستان کے بینکنگ سسٹم سے ڈیجیٹل طور پر منسلک ہونے اور پاکستان میں ان کی مالی خدمات کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ایک بہترین پلیٹ فارم مہیا کیا ہے۔

 وزیر اعظم نے اس امید کا اظہار کیا کہ روشن اپنا گھر بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو ذاتی یا اپنے خاندان کے لیے پاکستان میں گھر خریدنے کی سہولت فراہم کرے گا ، جو ان میں سے بہت سے لوگوں کے لیے سستے طریقہ کاراور بینک میں خود جانے کے عمل کی وجہ سے کافی مشکل رہا ہے۔

 انہوں نے کہا کہ روشن اپنا گھر ڈیجیٹل اسکیم متعارف کروانے کے بعد بینک میں درخواست جمع کرانے سے لے کر بینک کے ذریعے فنڈز کی تقسیم تک بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو اپنے لیے اور اپنے پیاروں کیلئے گھر خریدنا بہت آسان ہوجائے گا جس کو وہ اپنی رقم یا بینک فنانسنگ کےذریعے خرید سکتے ہیں۔

 روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ کی کارکردگی پر روشنی ڈالتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ آر ڈی اے اب ایک جانی پہچانی برانڈ ہے اور اس نے اب تک 2 لاکھ 15 ہزار سے زائد غیر ملکیوں کو ملک کے بینکاری نظام سے جوڑا ہے اور گزشتہ سال ستمبر میں اس کے آغاز کے بعد سے 2.05 ارب ڈالر سے زیادہ حاصل کیے ہیں۔

 گورنراسٹیٹ بینک ڈاکٹر رضا باقر نے نئی پروڈکٹ اپنا گھر متعارف کرواتے ہوئے کہا کہ روشن اپنا گھر غیر ملکی پاکستانیوں (این آر پیز) کے لیے اسٹیٹ بینک کا ایک اقدام ہے کہ وہ اپنی سرمایہ کاری یا بینک فنانسنگ کے ذریعے پاکستان میں اپنے گھر خریدیں یا تعمیر کروائیں۔

 بیرون ملک مقیم پاکستانی اپنی بینکنگ ٹرانزایکشن کو دور بیٹھے اور ڈیجیٹل طریقے سے مکمل کر سکیں گے۔ انہوں نے وضاحت کی کہ فنانسنگ روایتی اور شریعت کے مطابق دونوں اقسام میں تین سے 25 سال کی مدت کے لیے پرکشش نرخوں (ریٹ)  پر دستیاب ہوگی۔

 روشن اپنا گھر اسکیم کے ذریعے بیرون ملک مقیم پاکستانی حکومت کی میرا پاکستان میرا گھر اسکیم کے تحت بھی فنانسنگ حاصل کر سکیں گے۔ یہ خصوصی طور پر ان لوگوں کے لیے متعارف کیا گیا ہے جن کا پاکستان میں گھر نہیں ہے۔

 وزیر خزانہ شوکت ترین نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزارت خزانہ اسٹیٹ بینک کی مدد سے بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کے لیے سرمایہ کاری کی نئی راہیں متعارف کرانے کی ہر ممکن کوشش کرے گی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube