Tuesday, September 21, 2021  | 13 Safar, 1443

پیٹرول کی فروخت بلند ترین سطح پر

SAMAA | - Posted: Aug 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Aug 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago

فائل فوٹو

وزارت پیٹرولیم کی رپورٹ کے مطابق جولائی میں ملک میں 1 ارب 10 کروڑ لیٹر پیٹرول فروخت ہوا جو کہ اب تک کی بلند ترین سطح ہے۔

اعداد و شمار کے مطابق جولائی میں پاکستانیوں نے 8 لاکھ 8 ہزار 291 میٹرک ٹن پیٹرول خریدا، جون کے مقابلے میں جولائی میں پیٹرول کے استعمال میں 12.5 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

ماہر معاشیات عمار حبیب کے مطابق گاڑیوں کی بڑھتی ہوئی فروخت کے باعث لوگ پیٹرول زیادہ خرید رہے ہیں اور اس کے علاوہ معاشی سرگرمیوں میں بھی دن بدن اضافہ ہورہا ہے، جس سے معاشی ترقی کی شرح نمو بڑھانے میں مدد ملے گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کو معاشی شرح نمو میں اضافہ کرنا ہے، جس کیلئے معاشی سرگرمیوں کو بھی بڑھانا ہوگا، اس لئے پیٹرول کی فروخت میں مزید اضافہ ہونے کا امکان ہے۔

عمار حبیب کا کہنا ہے کہ پیٹرول زیادہ استعمال ہونے سے حکومت کو وافر مقدار میں پیٹرول کی درآمدات کرنا ہونگی، جس سے درآمدات بڑھیں گی اور پاکستان کے تجارتی خسارے میں بھی اضافہ ہوگا، پاکستان کو پہلے سے ہی 30.8 ارب ڈالر خسارے کا سامنا ہے جو کہ مالی سال 20-2019ء میں ہونے والے خسارے سے تقریباً 33 فیصد زیادہ ہے۔

ماہر معاشیات کے مطابق سی این جی کے مقابلے میں پیٹرول کی طلب زیادہ ہے کیونکہ حکومت کے پاس سی این جی کے ٹرانسپورٹ نیٹ ورک کی صلاحیت نہیں ہے، اس لئے پیٹرول کے مقابلے میں سی این جی کی مقدار بھی کم ہے۔

ماہر معاشیا ت نے مزید کہا کہ پیٹرول کی قیمت 120 روپے سے 150 روپے فی لیٹر رہنے کا امکان ہے تاہم پیٹرول کی قیمت اس سطح سے اوپر نہیں جائے گی کیونکہ حکومت کا ہدف معاشی شرح نمو میں مزید اضافہ کرنا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube