ملک میں پانی کے ذخائر خطرناک حد تک کم ہوگئے

SAMAA | - Posted: May 4, 2021 | Last Updated: 2 days ago
SAMAA |
Posted: May 4, 2021 | Last Updated: 2 days ago

ارسا نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ ملک میں پانی کا بحران سنگین ہورہا ہے اور آبی ذخائر میں تشویشناک حد تک کمی ہوگئی ہے۔

ارسا نے بتایا ہے کہ تربیلا ڈیم میں پانی کا ذخیرہ ڈیڈ لیول تک پہنچ گیا ہے۔چشمہ بیراج بھی خالی ہوگیا ہے اور منگلا ڈیم میں صرف 4 دن کا ذخیرہ باقی ہے۔

ارسا حکام کے مطابق ڈیموں اور بیراجوں میں پانی کا ذخیرہ صرف 5 لاکھ  30 ہزارایکڑ فٹ رہ گیا ہے۔ موجودہ صورتحال میں ملک میں پانی کا بحران پیدا ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے جبکہ چاول، گنا، کپاس اور مختلف سبزیوں کی فصلوں کو شدید نقصان کا اندیشہ ہے۔ اس کے علاوہ فی ایکڑ پیداوار میں کمی کا امکان بھی ہے۔

دوسری جانب ارسا اور واپڈا کے درمیان دریائے سندھ کے پانی پرتنازعہ کھڑا ہوگیا ہے۔3 روز قبل ارسا نے دریائے سندھ کے پانی سے متعلق واپڈا سوال پوچھا کہ دریائے سندھ کا پانی کہاں غائب ہورہا ہے۔ ارسا حکام نے بتایا کہ واپڈا نے دریائے سندھ کے پانی سے متعلق اتھارٹی کو کوئی جواب نہیں دیا۔

ارسا کا کہنا ہے کہ آج بھی دریائے سندھ میں بشام اور تربیلا کے درمیان 12 ہزار6 سو کیوسک پانی غائب ہے۔ دریائے سندھ میں بشام کے مقام پر پانی کا بہاؤ56ہزار5 سو کیوسک جبکہ تربیلا ڈیم میں پانی کی آمد 43 ہزار 9 سو کیوسک ہے۔ ارسا نے تمام تر صورتحال کے بارے میں وفاقی حکومت کو آگاہ کردیا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube