Friday, October 23, 2020  | 5 Rabiulawal, 1442
ہوم   > معیشت

پنجاب میں 20کلوآٹےکاتھیلا860روپےمیں دستیاب نہیں

SAMAA | - Posted: Sep 25, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago
SAMAA |
Posted: Sep 25, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago

گندم کی درآمد سے ہی مسئلہ حل ہوگا

پنجاب ميں سستا آٹا نایاب ہوگیا ہے اورشہری اوپن مارکیٹ سے مہنگا آٹا خریدنے پر مجبور ہیں۔مل مالکان کا کہنا ہے کہ گندم کی درآمد سے ہی مسئلہ حل ہوگا۔

پنجاب میں حکومت نے20 کلو آٹے کے تھیلے کی قیمت 860 روپےمقرر کی ہے لیکن سستا آٹا دستیاب ہی نہیں ہے۔

دکانداروں کے مطابق فلور مل کئی کئی روز کے بعد ہی آٹے کی سپلائی دیتی ہیں جس کی وجہ سےعوام کی ضروریات پوری کرنا مشکل ہورہا ہے۔

دوسری طرف مل مالکان آٹےکی قلت کی تمام تر ذمہ داری پنجاب حکومت پر ڈالتے ہیں۔ان کےمطابق اس وقت پچھلے سال کی نسبت سرکاری گندم کی فراہمی میں 30 فیصد تک کمی ہے۔

سابق چیرمین پاکستان فلارملزایسوسی ایشن میاں محمد ریاض نےبتایا کہ پچھلے سال حکومت ان دنوں 24ہزارٹن گندم روزانہ فراہم کرتی تھی،اس بار17 ہزارٹن مل رہی ہے،اس کی وجہ سےنجی شعبےسےگندم لےکرمہنگا آٹا فروخت کرنا پڑ رہا ہے۔

مل مالکان کا کہنا ہے کہ اگرحکومت مزید 10لاکھ ٹن گندم درآمدکرلےتوآٹےکی سپلائی میں بہتری آسکتی ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube