Thursday, July 9, 2020  | 17 ZUL-QAADAH, 1441
ہوم   > معیشت

کرونا وائرس: آم کی برآمد میں 40 فیصد کمی

SAMAA | - Posted: May 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: May 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago

برآمدات 80 ہزار ٹن تک محدود کردی گئی

کرونا کی وباء نے پھلوں کے بادشاہ آم کی برآمد بھی مشکل میں ڈال دی، اِس بار پاکستان سے بيرون ملک آم کی برآمدات 80 ہزار ٹن تک محدود کردی گئی، جو گزشتہ سال کے مقابلے ميں 40 فيصد کم ہے۔

پاکستان سے بيرون ملک آم بھيجنا اب آسان نہیں رہا، کساد بازاری اور لاک ڈاﺅن کی وجہ سے آم کی طلب میں غیر معمولی کمی واقع ہوگئی۔ رواں سال ايکسپورٹ 40 فيصد کم ہونے کا انديشہ ہے اور اِس کی ايک بڑی وجہ فضائی کرايوں ميں ہوشرُبا اضافہ ہے۔

پاکستان فروغ اینڈ ویجیٹیبل ایکسپورٹرز ایسوشن کے پیٹرن انچیف وحید احمد کا کہنا ہے کہ صرف کرونا ہی نہيں آم کی برآمدات ميں موسمياتی تبديلی بھی رکاوٹ بنی، رواں سال آم کی برآمد سے زرمبادلہ 4 کروڑ ڈالر کم رہنے کا خدشہ ہے۔

برآمدات کی کمی کی وجہ سے اس بار مقامی مارکیٹ میں آم زیادہ مقدار میں آنے اور قیمتوں میں بھی کمی کا امکان ہے، جس سے پاکستانیوں کو اچھا آم کھانا میسر آسکتا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube