ہوم   > معیشت

اسٹاک مارکیٹ میں مندی، ٹریڈنگ دوسرے روز بھی معطل

SAMAA | - Posted: Mar 25, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Mar 25, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago

فائل فوٹو : آن لائن

لاک ڈاؤن کے دوران پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے دوسرے روز شدید مندی کے باعث ٹریڈنگ ہفتے میں دوسری مرتبہ دو گھنٹے کےلیے عارضی طور پر معطل کر دی گئی۔

پاکستان سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن نے پیر 23 مارچ کو اسٹاک مارکیٹ کو کھلا اور آپریشنل رکھنے کا اعلان کیا تھا۔

بدھ 25 مارچ کو اسٹاک مارکیٹ کھلی تو ابتدا میں 202 پوائنٹس کا اضافہ دیکھا گیا تاہم کچھ دیر میں شدید مندی کے باعث 1270 پوائنٹس کی کمی سے 100 انڈیکس 28 ہزار کی سطح سے نیچے آنے کے بعد ٹریڈنگ 27 ہزار 294 پر روک دی گئی۔

اس دوران 100 انڈیکس میں 4.45 فیصد کی کمی ہوئی۔

منگل 24 مارچ کو کاروبار کے آغاز میں اسٹاک ماریٹ کا 100 انڈیکس 30 ہزار 667 پوائنٹس پر موجود تھا لیکن ٹریڈنگ کے دوران 100 انڈیکس 29 ہزار کی سطح سے نیچے آنے کے بعد دن کے اختتام پر 28 ہزار 564 پر بند ہوا۔

موجودہ صورت حال کے تناظر میں ایس ای سی پی نے پی ایس ایکس کو ہدایات جاری کی تھی کہ اسٹاک مارکیٹ میں ٹریڈنگ صبح 11 بجے شروع کی جائے گی جبکہ مارکیٹ ہالٹ کا دورانیہ بھی 45 منٹ سے بڑھا کر 2 گھنٹہ کر دیا جائے گا۔

یہ ہدایات مارچ 24 سے لے کر آئندہ 15 دن کےلیے ہیں۔

اس سلسلے میں کپیٹل مارکیٹ سے منسلک اداروں بشمول پاکستان اسٹاک ایسچینج، پاکستان مرکنٹائل ایکسچینج، نیشنل کلئرنگ کمپنی، سینٹرل ڈیپازٹری میں کاروبار کے تسلسل کو یقینی بنانے کے تمام اداروں میں کم سے کم افرادی قوت کے ساتھ کام جاری رکھنے کے انتظامات کر لیے گئے ہیں۔

ایس ای سی پی کی درخواست پر حکومت سندھ نے ایس ای سی پی اور اسٹاک مارکیٹ کو انتہائی ضروری خدمات کی فہرست شامل کرلیا ہے جہاں کم سے کم افرادی قوت کے ساتھ کاروباری تسلسل جاری رکھا جائے گا جبکہ ان اداروں کے زیادہ تر ملازمین گھروں سے خدمات انجام دیں گے۔

WhatsApp FaceBook
PSX

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube