سوزوکی کمپنی کا مہران گاڑیوں کی پیداوار بند کرنےکافیصلہ

Samaa Web Desk
September 7, 2018

 

سوزوکی کمپنی نے اگلے سال اپریل سے مہران گاڑیوں کی پیداوار بند کرنےکافیصلہ کیاہے۔ گاڑی کا شمار مڈل کلاس گھرانوں کی پسندیدہ گاڑیوں میں ہوتاہے۔

مہران گاڑی کو پہلی بار 1989 میں متعارف کروایاگیاتھا۔اس کے بعد سےاب تک اس کے ڈیزائن میں تھوڑی بہت کمی بیشی کی گئی۔ پچھلے 30 برس تک یہ پاکستان کی مقبول ترین گاڑی رہی ہے۔ اس کی مینٹینس پر کم لاگت آتی ہے جو اس کی مقبولیت کی اہم وجہ ہے۔

پاکستان آٹو موٹیو مینوفیکچرزایسوسی ایشن کے اعداد و شمار کےمطابق سال 2012 سے سال 2017 تک  پاک سوزوکی نے ایک لاکھ 68 ہزار مہران گاڑیاں تیار کیں ۔

پاک سوزوکی کے اپنے ڈیلرز کےنام نوٹی فیکشن میں بتایا گیاہےکہ بغیر اےسی مہران وی ایکس کی پیداوار رواں سال نومبر سے بند کردی جائےگی۔ مہران  وی ایکس آر ویریئنٹ،اےسی والی گاڑی کی پیداوار اگلےسال مارچ کےآخر میں بند کردی جائےگی۔

نوٹی فیکیشن کےمطابق مہران وی ایکس  کے اب صرف 4ہزار574 یونٹس اور وی ایکس آر ماڈل کے19ہزار247 یونٹس تیار کئےجائیں گے۔

 

 
 
 

ضرور دیکھئے