اقتصادی رابطہ کمیٹی کی پی ایس او کو 10 ارب روپے جاری کرنے کی منظوری

Shakeel Ahmed
August 29, 2018

پی ایس او کا مالی بحران سنگین ہوا تو اقتصادی رابطہ کمیٹی نے دس ارب روپے جاری کرنے کی منظوری دے دی۔

پی ایس او کو مالی بحران سے نکالنے کی تیاری جاری ہے۔ پاور سیکٹر اور دیگر اداروں پر واجبات تین سو پچیس ارب روپے سے بڑھ گئے تو تشویش کی لہر دوڑ گئی ۔

پی ایس او کوبحران سے نکالنےکےلیے فوری طور پر پینتیس سے چالیس ارب روپے درکار ہیں۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں پی ایس اوکودس ارب روپے جاری کرنے کی منظوری دے دی گئی ۔ اجلاس میں گیس کی قیمتوں میں اضافے کی سمری مؤخر کردی گئی ۔

پی ایس او ترجمان کے مطابق صرف پاور سیکٹر پر دو سو ستتر ارب روپے،قومی ائیر لائن پر فیول کی مد میں سولہ ارب جبکہ سوئی ناردرن گیس پر درآمد ایل این جی کی مد میں بائیس ارب روپے واجب الادا ہیں ۔

معاشی ماہرین کہتے ہیں کہ واجبات کی عدم ادائیگی پر پی ایس او کو قرضے لینے پڑتے ہیں جس سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں پر فرق پڑتا ہے ۔