ایف بی آر کی ناقص پالیسی ، قومی خزانے کو 60 ارب روپے کا نقصان

Samaa Web Desk
May 23, 2018

 

سگریٹوں کے بارے میں ایف بی آر کی ناقص پالیسی کے باعث قومی خزانے کو ساٹھ ارب روپے کا نقصان ہوگیا، یہ انکشاف خورشید شاہ کی زیر صدارت پبلک اکاونٹس کمیٹی کے اجلاس میں کیا گیا ۔

خورشید شاہ کی زیر صدارت پبلک اکاونٹس کمیٹی کے اجلاس میں سگریٹ کے شعبے پر خصوصی آڈٹ رپورٹ پی اے سی میں پیش کی گئی جس میں ایف بی آر کی قوانین پر عمل درآمد میں ناکامی کا انکشاف کا انکشاف ہوا ہے، ایف بی آر کی غلط پالیسی سے خزانے کو 60 ارب روپے کا نقصان ہوا ہے ۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سگریٹ کی تیسری کیٹگری متعارف کرانے سے ٹیکس کم ہوگیا، ایف بی آر سگریٹوں اسمگلنگ روکنے میں بھی ناکام رہا۔

سگریٹ ایکسائز ڈیوٹی میں کمی پر پی اے سی نے سپریم کورٹ جج کی سربراہی میں تحقیقات کا مطالبہ کردیا کہا کہ ایف بی آر نے جان بوجھ کر قومی خزانے کو نقصان پہنچایا۔

اس موقع پرخورشید شاہ کا کہنا تھا کہ ملک کے 25 فیصد شہریوں کو بیماریوں میں مبتلا کیا گیا، ائیرپورٹس پر سگریٹس سمگلنگ کیوں نہیں رکی،تحقیقات کی جائیں۔

خورشید شاہ نے کہا کہ ملک میں غیر قانونی سگریٹس اتنے ہیں کہ پوری پارلیمنٹ بھر جائے، غیر قانونی سگریٹس سے وزیراعظم ہاوس، ایوان صدر،وزرا کے گھر بھی بھر سکتے ہیں۔