تھر میں کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے پراجیکٹ پر کام جاری

November 15, 2017

تھر پارکر : تھر میں کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے پراجیکٹ پر کام تیزی سے جاری ہے۔ دو ہزار انیس تک یہ پراجیکٹ پاکستان کو بجلی تیار کرکے دینا شروع کردیگا۔

صحرائے تھر کی قسمت بدلنے والی ہے، علاقے میں ایک سو پچھتر بلین ٹن کوئلے کے ذخائر کا کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کا منصوبہ شروع کیا جا رہا ہے۔ منصوبہ سندھ حکومت اور پرائیوٹ سیکٹر کے مشترکا تعاون سے شروع کیا گیا ہے۔ اوپن پٹ مائین میں کھدائی کا عمل تیزی سے جاری ہے۔

 

مقامی تھر واسی بھی منصوبے کا حصہ ہیں ، خواتین بھی بڑی تعداد میں ڈمپر ٹرک چلانے کیلئے تیار ہیں۔ پاور پلانٹ کے تین سو تیس میگاواٹ کے دو یونٹس تکمیل کے مراحل میں ہیں، جہاں کوئلے سے بجلی کے پیدواری عمل کا آغاز ہوگا۔

 

پہلے مرحلے میں بلاک ٹو سے تین اعشاریہ دو ملین ٹن کوئلہ نکالا جائیگا، جس کے ذریعے دوہزار انیس چھ سو ساٹھ میگا واٹ بجلی پاکستان کے گرڈ میں شامل ہوگی۔ دو ہزار تیس تک تھر میں کوئلے سے بجلی کی پیدوار کو بتدریج چار ہزار میگا واٹ تک پہنچادیا جائیگا۔ سماء

Email This Post
 

:ٹیگز

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.