بہاولپورکاتاریخی ریلوےاسٹیشن ماضی کی حسین یادگار

May 16, 2018

رپورٹ: احسن انصاری

بہاولپورمیں ایک ایسابوڑھا ریلوے اسٹیشن ہےجس کادامن وقت نے ویرانی اور خستہ حالی سے بھر دیا ہے۔

بہاولپور کےاس ریلوے اسٹیشن پر نہ قُلیوں کی صَدائیں ہیں اورنہ ہی ہارن کا شورہے۔ وقت کے پلیٹ فارم پر کھڑے کھڑے فراموش ہوجانے والا یہ ریلوے اسٹیشن بہاولپور سے صرف 15 کلومیٹر کی مسافت پر واقع ہے۔ ڈیرہ بکھا ریلوےاسٹیشن کبھی کراچی سے بھارت جانے والی ٹرینوں کی گزرگاہ تھامگر اب اس کی خاموش پٹریوں سے صرف صحرائی جہاز ہی گزرتے  ہیں۔

مضبوط بنیادوں پر ڈٹاہوا یہ اسٹیشن انگریز دور میں سفراورتجارت کی غرض سے تعمیر ہوا۔ تاریخ نےکروٹ بدلی تو یہ راستہ مسلمانوں کی ہجرت کا ذریعہ بھی بنا۔ چھ سال قبل آخری ٹرین روانہ کرنے کے بعداپنےرنگین ماضی کاامین یہ اسٹیشن اپنی آخری منزل کامنتظرہے۔