Saturday, November 28, 2020  | 11 Rabiulakhir, 1442
ہوم   > بلاگز

فٹبال ورلڈکپ2022: جنوبی امریکا زون میں کوالیفائنگ راؤنڈ مقابلے

SAMAA | - Posted: Nov 21, 2020 | Last Updated: 1 week ago
SAMAA |
Posted: Nov 21, 2020 | Last Updated: 1 week ago
Football world cup

فوٹو: اے ایف پی

دنیا کے مقبول ترین کھیل فٹبال کا عالمی میلہ 2022 میں پہلی بار عرب ملک میں منعقد ہو رہا ہے۔ کرونا وائرس کی وجہ سے 6 ماہ سے زائد عرصے فٹبال کی عالمی سرگرمیاں معطل تھیں۔ قطر میں ہونے والے اس ورلڈ کپ کیلئے قی الوقت جنوبی امریکا ہی دنیا کا واحد ایسا ریجن ہے جہاں اس ورلڈ کپ فائنلز کیلئے کوالیفائنگ راؤنڈ کے مقابلے منعقد ہو رہے ہیں۔ ورلڈ کپ فائنلز کیلئے فیفا کے چھ ریجنز سے 32 ممالک کوالیفائی کریں گے۔ یوایفا (یونین آف یورپیئن فٹ بال ایسوسی ایشنز) سے سب سے زیادہ 13 ٹیموں‘ افریقہ سے  5 ٹیموں‘ کونکا کاف (کنفیڈریشن آف نارتھ امریکا اینڈ کیریبئین ایسوسی ایشن فٹبال) سے 4.5 ٹیموں‘ ایشین فٹبال کنفیڈریشن (اے ایف سی) سے 4.5  ٹیمیں‘ ساؤتھ امریکن فٹبال کنفیڈریشن سے 4.5 ٹیموں اور اوشینیا فٹبال کنفیڈریشن (او ایف سی) سے 0.5 ٹیم کی نمائندگی ہے۔ نارتھ امریکا‘ ساوتھ امریکا اور ایشیا زون میں اپنے اپنے کوالیفائنگ راؤنڈز میں پانچویں نمبر پر آنے والی ٹیموں اور اوشینیا میں ٹاپ کی ٹیم کو ورلڈ کپ فائنلز میں رسائی کیلئے انٹر کنفیڈریشن پلے آف میچز کھیلنا پڑتے ہیں اور دو فاتح ٹیمیں فائنلز میں جگہ بنانے میں کامیاب ہوتی ہیں۔ آسٹریلیا پہلے اوشینیا میں شامل تھا لیکن اس ریجن سے اس کے فائنلز میں رسائی کے امکانات معدوم ہوتے تھے کیونکہ اسے مضبوط ٹیموں کے خلاف پلے آف میچ کھیلنا پڑتے تھے جبکہ ایشین کنفیڈریشن میں شامل ہونے کے بعد وہ براہ راست فائنلز کیلئے کوالیفائی کرنے میں کامیاب ہو رہا ہے۔

جنوبی امریکن زون کا کوالیفائنگ راؤنڈ سب سے پیچیدہ اور مشکل ہوتا ہے جس میں 10 رکن ملکوں کو 18‘ 18 میچز کھیلنا پڑتے ہیں۔ اس ریجن میں فٹبال ٹیموں کے میچز کے بارے میں کوئی یقینی بات نہیں کہی جا سکتی۔ میچوں کے نتائج غیر متوقع ہوتے ہیں کیونکہ تمام کھلاڑی ایک دوسرے کے کھیل سے بخوبی آگاہ ہوتے ہیں۔ اس ریجن کی ہر ٹیم کے پاس ایسے کھلاڑی ہیں جو اپنے سحر انگیز کھیل سے دنیائے فٹبال میں مقبول ہیں۔ گزشتہ ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ میں ارجنٹینا کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ جنوبی امریکا فٹبال کنفیڈریشن میں فیفا کے رکن ملکوں میں برازیل‘ ارجنٹینا‘ بولیویا‘ پیرو‘ کولمبیا‘ یوروگوئے‘ چلی‘ وینزویلا‘ ایکویڈور اور پیراگوئے شامل ہیں۔ جنوبی امریکن فٹبال کنفیڈریشن کی کونسل نے کوالیفائنگ راؤنڈ میں اس مرتبہ بھی گزشتہ 6 ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ کے اسٹرکچر کو برقرار رکھا۔ ہر ٹیم ایک دوسرے کے خلاف دو میچز کھیلے گی جو ایک ہوم اور ایک آوے ہوگا۔ ڈراز 19 دسمبر 2019 کو نکالے گئے تھے۔ اس  بار کوالیفائنگ راؤنڈ میں ویڈیو اسسٹنٹ ریفری سسٹم کو استعمال کیا جا رہا ہے۔

کوالیفائنگ راؤنڈ کا آغاز شیڈول کے مطابق 12 مارچ 2020 میں ہونا تھا لیکن کرونا وائرس کوویڈ 19 پینڈامک کی وجہ سے اسے منسوخ کر دیا گیا۔ پھر جون میں میچز کروانے کا اعلان ہوا لیکن صورت حال بہتر نہ ہونے کی وجہ سے اسے پھر موخر کرنا پڑا تھا۔ بعد میں اسے اکتوبر کیلئے شیڈول کیا گیا۔ اکتوبر شروع ہونے والے کوالیفائنگ راؤنڈ کے 4 مراحل مکمل ہو چکے ہیں جس میں برازیل شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پوائنٹس ٹیبل پر سرفہرست ہے۔ تمام ٹیموں نے چار چار میچ کھیلے ہیں۔ برازیلین ٹیم اپنے چاروں میچ جیت کر 12 پوائنٹس حاصل کیے جبکہ ارجنٹینا تین فتوحات کے ساتھ 10 پوائنٹس‘ ایکویڈور تین فتوحات 9 پوائنٹس‘ پیراگوئے چھ پوائنٹس‘ یورو گوئے چھ پوائنٹس‘ چلی نے 4‘ کولمبیا نے 4‘ وینزویلا نے 3‘ پیرو اور بولیویا نے ایک ایک پوائنٹ حاصل کیا ہے۔ پانچواں مرحلہ 25 مارچ 2021 کو ہوگا جبکہ اس زون میں کوالیفائنگ راؤنڈ کے آخری مرحلے کے میچز 29 مارچ 2022 کو کھیلے جائیں گے۔

گزشتہ 51 برسوں میں ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤند میں برازیل کا یہ بہترین آغاز ہے جس میں وہ ابتدائی چار میچوں میں ناقابل شکست ہے۔ 1970 کے میکسیکو ورلڈ کپ کیلئے برازیل کی کوالیفائنگ کمپین اسی فاتحانہ انداز میں تھی جب لیجنڈ پیلے اور ٹوسٹاؤ گولز کی بھرمار کر رہے تھے۔ برازیلین فٹبالرز نے یورو گوئے کے ہوم گراؤنڈ پر بہترین کھیل پیش کیا اور اپنے ناقابل شکست ریکارڈ کو برقرار رکھتے ہوئے میزبان ٹیم کو 2-0 سے زیر کر کے اہم کامیابی حاصل کی۔ برازیل نے دونوں گول پہلے ہاف میں کیے۔ انتہائی تیز رفتاری سے شروع ہونے والے میچ میں دونوں ٹیموں نے پہلے سبقت حاصل کرنے کی کوششیں کیں لیکن برازیل کے آرتھر میلو نے 33 ویں منٹ میں گول کر کے ٹیم کو سبقت دلوادی اور پہلے ہاف کے 45 ویں منٹ میں ریچارلیسن نے دوسرا گول کر دیا۔ یوروگوئے کے کھلاڑی سرتوڑ کوشش کے باوجود برازیل کے مضبوط دفاعی حصار میں شگاف ڈالنے میں ناکام رہی تاہم دوسرے ہاف میں ریچارلیسن کے خلاف خطرناک فاؤل کے نتیجے میں میزبان ٹیم کے اسٹار سٹرائیکر کیوانی کو ریڈ کارڈ دکھا کر باہر بھیج دیا گیا اور اس طرح اب وہ معطلی کی وجہ سے اگلے میچ کیلئے بھی دستیاب نہیں ہوں گے۔ اس اہم میچ میں یوروگوئے کے ٹاپ اسکورر لوئیس سواریز کوویڈ 19 اور برازیل کے سپر اسٹار نیمار انجری کی وجہ سے حصہ نہیں لے سکے تھے۔ برازیل نے یوروگوئے کے خلاف 11 میچوں میں سے پانچ جیتے اور پانچ ڈرا ہوئے۔ یوروگوئے نے 2001 میں سیٹاریو میں 2001 میں برازیل کو 1-0 سے زیر کیا تھا۔ برازیل نے اسٹیٹ مونٹی ویڈو کے آخری دو دوروں میں یوروگوئے کو 4-1 اور 4-0 سے ہرایا تھا۔

برازیلین ٹیم نے اپنے دیگر تین میچوں میں بہترین کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے حریف ٹیموں کو شکست سے دو چار کیا۔ برازیل نے اپنے پہلے میچ میں شاندار کھیل پیش کرتے ہوئے بولیویا کو صفر کے مقابلے میں پانچ گول سے شکست دی تھی۔ برازیل کی جانب سے فرمینو نے دو‘ مارکوئنہوس‘ کوٹنیہو اور کراسکو نے ایک ایک گول کیا۔ برازیل نے دوسرے میچ میں پیرو کو دو کے مقابلے میں چار گول سے شکست دی تھی جس میں برازیلین سپر اسٹار نیمار سحر  انگیز کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ہیٹ ٹرک کرنے میں کامیاب ہوئے۔ چوتھا گول ریچارلیسن نے کیا تھا۔ اس ہیٹ ٹرک کی وجہ سے وہ برازیلین سٹار رونالڈو 62 گول سے آگے نکل گئے اور نیمار کے انٹرنیشنل گولز کی تعداد 64 ہوگئی اور وہ برازیل میں پیلے کے بعد دوسرے نمبر پر آگئے۔ پیرو کے کامیو اور ٹاپیا نے ایک ایک گول کیا تھا۔ برازیل اپنے تیسرے میچ میں سخت مقابلے کے بعد وینزویلا کو فرمینو کی گول کی بدولت  صرف ایک گول سے ہرانے میں کامیاب ہوسکا۔ کوالیفائنگ راؤنڈز میں وینزویلا کے خلاف 17 میچز میں برازیل کی یہ 16 ویں فتح تھی جبکہ ایک میچ بے نتیجہ رہا۔ وینزویلا کی ٹیم صرف ایک گول کر سکی جبکہ برازیلین فٹبالرز نے 63 گول کیے۔ اس میچ میں نیمار زخمی ہونے کی وجہ سے حصہ نہیں لے سکے تھے۔

جب 2016 سے ٹیٹ نے برازیلین فٹبال ٹیم کا چارج سنبھالاہے برازیل کوالیفائنگ راؤنڈ میں ناقابل شکست ہے۔ برازیل نے اب تک 16 میں سے 14 کوالیفائنگ راؤنڈ میچز جیتے اور دو ڈرا ہوئے جبکہ برازیلین فٹبالرز نے 42 مرتبہ گیند کو گول پوسٹ میں پہنچایا اور ان کے خلاف صرف پانچ گول ہوئے۔

ارجنٹینا نے اپنے پہلے میچ میں ایکویڈور کو لیونل میسی کے گول کی بدولت ایک صفر سے ہرایا۔ دوسرے میچ میں ارجنٹینا نے بولیویا کو ایک کے مقابلے میں دو گول سے زیر کیا۔ ارجنٹینا کے ماررٹینز اور کوریا جبکہ بولیویا کے مورینو نے گول کیے۔ تیسرے میچ میں ارجنٹینا کو اپنے ہوم گراؤنڈ بیونس آئرس میں پیراگوئے کی سخت مزاحمت کا سامنا کرنا پڑا اور یہ مقابلہ 1-1 سے برابر ہوا جس میں پیراگوئے کے رومیرو اور میزبان ٹیم کے گونزالز گول کرنے میں کامیاب رہے۔ ارجنٹینا نے چوتھے میچ میں گونزالز اور مارٹینیز کے گولز کی بدولت پیرو کو 2-0 سے شکست دی۔ پیرو کے خلاف چھ ورلڈ کپ کوالیفائنگ میچز میں میسی کوئی گول کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکے۔ ارجنٹینا 35 برس میں پیرو سے کوئی اوے میچ نہیں ہارا۔ ورلڈ کپ کوالیفائینگ میچز میں ارجنٹینا نے 10 میچ جیتے دو ہارے اور 7 ڈرا ہوئے۔ ارجنٹینا کے کپتان لیونل میسی پیرو کیخلاف میچ کھیل کر جنوبی امریکا میں انٹرنیشنل میچز کھیلنے والے ٹاپ کھلاڑیوں کی فہرست برازیل کے کافو کے ساتھ  پانچویں نمبر پر آ گئے۔ یہ میسی کا 142 واں انٹرنیشنل میچ تھا۔ جیوئیر زینیٹی (143) میچز کے ساتھ چوتھے‘ جیویر مشیرانو (147) میچ  تیسرے‘ پاؤلو ڈیلو سلوا (148) دوسرے اور ایوان ہرٹاڈو (168) میچوں کے ساتھ پہلے نمبر پر ہیں۔

ایکویڈور کو پہلے میچ میں ارجٹینا سے شکست ہوئی تھی جبکہ اس نے دوسرے میچ میں غیر متوقع طور پر یورو گوئے کو دو کے مقابلے میں چار گول سے شکست دی جبکہ تیسرے میچ میں ایکویڈور نے بولیویا کو دو کے مقابلے میں تین گول سے زیر کیا۔ چوتھے میچ میں ایکویڈور نے کولمبیا کو6-1 کے بڑے مارجن سے  ہرایا۔ یہ ورلڈ کپ کوالیفائنگ میں کولمبیا کے خلاف ریکارڈ کامیابی تھی اس سے قبل  ایکویڈور کولمبیا کو دو گول سے زیادہ مارجن سے شکست نہیں دے سکا تھا۔

یوروگوئے کو 1930 میں پہلے ورلڈ کپ  کی میزبانی اور پہلے عالمی فٹبال چیمپئن ہونے کا اعزاز حاصل ہے۔ یوروگوئے نے پہلے میچ میں چلی کو ایک کے مقابلے میں دو گول سے زیر کیا۔ دوسرے میچ میں ایکویڈور سے شکست کھائی۔ تیسرے میچ میں کولمبیا کو 3-0 سے ہرانے میں کامیاب رہا تھا۔ پوروگوئے کو چوتھے میچ میں برازیل سے 2-0 سے شکست اٹھانا پڑی۔ پیراگوئے اور پیرو کا پہلامیچ 2-2 سے برابری پر ختم ہوا۔ دوسرے میچ میں  پیراگوئے نے وینزویلا کو 0-1 سے شکست دی۔ پیراگوئے کا تیسرا میچ ارجنٹینا سے 1-1 برابری سے منتج ہوا۔ پیراگوئے کا چوتھا  میچ بولیویا کے ساتھ 2-2 سے برابر رہا۔ چلی اور کولمبیا کا پہلا میچ  2-2 سے برابر رہا۔ دوسرے میں چلی نے پیروکو 2-0 سے ہرایا۔ پیروکی ٹیم چلی کے خلاف کوئی اوے میچ نہیں جیت سکی۔ آٹھ میچوں میں چلی فاتح اور ایک ڈرا ہوا۔ یہ چلی کے ہاتھوں چھ میچوں میں پیرو کی پانچویں شکست تھی۔

یوروگوئے کے اسٹرائیکر لوئیس سواریز نے جنوبی امریکن ورلڈکپ کوالیفائنگ راؤنڈ کا پہلا گول کیا اور وہ تیسری مرتبہ یہ کارنامہ انجام دینے میں کامیاب ہوئے۔ اس سے قبل انہوں نے 2010 اور 2014  کے کوالیفائنگ راونڈز میں اولین گول کیا تھا جبکہ 2018 میں یوروگوئے ہی کے فٹبالر مارٹن کیسیراس نے اولین گول کیا تھا اس طرح مسلسل چار ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ میں یوروگوئے کی ٹیم کو ریجن میں اولین گول کرنے کا اعزاز حاصل ہے۔ سواریز نے چلی اور ایکویڈور کے خلاف گول کر کے جنوبی امریکن ریجن میں ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈز میں سب سے زیادہ گول کرنے والے فٹ بالر کا اعزاز حاصل کر لیا اور لیونل میسی کو پیچھے چھوڑ دیا۔ اب وہ 25 گول کے ساتھ سر فہرست ہیں۔ وہ اپنے کیریئر میں ورلڈ کپ کا چوتھا کوالیفائنگ راؤنڈ کھیل رہے ہیں۔ انہوں نے 2010‘ 2014‘ 2018‘ کے ورلڈ کپ کے کوالیفائنگ راؤنڈز میں بھی حصہ لیا تھا۔ انہوں نے 47 کوالیفائنگ راؤنڈ  میچز میں یہ کارنامہ انجام دیا۔ ارجنٹینا کے لیونل میسی کا یہ پانچواں ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ ہے اور وہ 46 میچز میں 22 گول کر پائے ہیں۔ ارجنٹینا کے ہرنین کرسپو 33 میچز میں 19 گول تیسرے اور چلی کے مارسیلو سلاس 32 میچز میں 18 گول چوتھے اور چلی ہی کے ایوان زمورانو 23 میچز میں 18 گول کے ساتھ پانچویں نمبر پر ہیں۔ یہ بات دلچسپ اور حیران کن ہے کہ سب سے زیادہ ورلڈ کپ جیتنے والے ملک برازیل کا کوئی بھی فٹبالر ٹاپ فائیو گول سکوررز میں شامل نہیں ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube