Thursday, December 3, 2020  | 16 Rabiulakhir, 1442
ہوم   > بلاگز

ایگا سواٹیک‘ ٹینس کے افق پر روشن ستارے کا اضافہ

SAMAA | - Posted: Oct 13, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 13, 2020 | Last Updated: 2 months ago
Iga Swiatek

فوٹو: اے ایف پی

اکتوبر کا مہینہ پولینڈ کیلئے خوشخبریوں کا مہینہ ہے کیونکہ اس مہینے کے آغاز میں پولش فٹبال کپتان رابرٹ لیونڈوسکی یونین آف یورپین فٹبال ایسوسی ایشنز کے دو اعزازات لے اڑے اور ایک ہفتے بعد 19 سالہ غیر معروف پولش ٹینس کھلاڑی ایگا سواٹیک نے فرنچ اوپن ویمنز سنگلز کا اعزاز جیت کر اپنے ملک کیلئے ایک اور کارنامہ انجام دیا اور نئی تاریخ رقم کر دی۔ ایگا نے فائنل میں آسٹریلین اوپن چیمپئن امریکن سیڈ 4 صوفیہ کینن کو 6-4 اور 6-1 سے باآسانی ہرا کر اپنے کیریئر کا پہلا گرینڈ سلام جیتا۔ ایگا سواٹیک مینز اور ویمنز کیٹیگری دونوں میں گرینڈ سلام ٹائیٹل جیتنے والی پہلی پولش کھلاڑی ہے۔ ایگا کو یہ منفرد اعزاز بھی حاصل ہوا ہے کہ وہ  مینز ویمنز دونوں کیٹیگری میں پہلی گرینڈ سلام چیمپئن ہے جس کی پیدائش 21 ویں صدی میں ہوئی۔ اس کامیابی کے ساتھ ہی وہ عالمی رینکنگ میں نمبر 54 سے لمبی چھلانگ لگاتے ہوئے عالمی نمبر 17 کے درجے پر پہنچ گئی۔ وہ اپنے ساتویں گرینڈ سلام ٹورنامنٹ میں ہی پہلا گرینڈ سلام جیتنے میں کامیاب ہوئی۔ گزشتہ 20 برسوں میں کوئی بھی کھلاڑی اتنی جلدی گرینڈ سلام ٹائٹل نہیں جیت پائی۔ اس سے قبل کینیڈا کی بیانکا اینڈریسکو نے 2019 میں سرینا ولیمز کو ہرا کر یو ایس اوپن جیتا تھا جو بیانکا کا 10 واں گرینڈ سلام ایونٹ تھا۔

فرنچ اوپن فاتح ایگا نے پورے ٹورنامنٹ میں سات میچوں کے 14 سیٹ میں صرف 28 گیمز ہاریں جبکہ کوئی بھی حریف ان سے سیٹ نہیں جیت سکی جبکہ ان کی مدمقابل صوفیہ کینن نے ٹورنامنٹ میں چھ سیٹ اور 66 گیمز میں شکست کا منہ دیکھا۔ صوفیہ کو چار میچوں میں تین سیٹ تین کھیلنا پڑے تھے۔ سواٹیک 2007 میں بیلجیئم کی جسٹن ہینن کے بعد پہلی خاتون کھلاڑی ہے جس نے رولینڈ گیروس پر کھیلے جانے والے ٹورنامنٹ میں کوئی سیٹ ڈراپ کیے بغیر ٹائٹل جیتا۔ وہ 1975 میں ٹینس کی عالمی رینکنگ متعارف کروائے جانے کے بعد کم ترین رینکنگ 54 پر رہتے ہوئے فرنچ اوپن جیتنے والی چیمپیئن ہے۔ 1992 میں مونیکا سیلیز 16 سال 6 ماہ کی عمر میں فرنچ اوپن ٹائٹل جیتا تھا اور وہ فرنچ اوپن کی تاریخ میں سب سے کم عمر خاتون چیمپئن ہیں۔ سیلیز نے فائنل میں اسٹیفی گراف کو ہرایا تھا جبکہ ایگا سواٹیک  مونیکا سیلیز کے بعد فرنچ اوپن کی کم عمر فاتح ہے۔

ایگا فرنچ اوپن جیتنے والی دوسری ان سیڈڈ کھلاڑی ہے۔ اس سے قبل 2017 میں لیٹویا کی یلینا اوسٹا پنکو نے ان سیڈڈ کھلاڑی کی حیثیت سے سیمونا ہالیپ کو فرنچ اوپن فائنل میں شکست دی تھی اور اتفاق ہے کہ یہ گرینڈ سلام اعزاز ایگا کی طرح اوسٹا پنکوکے کیریئر کا پہلا ٹائٹل تھا جبکہ برازیل کے گستاؤکیورٹن نے بھی 1997 میں فرنچ اوپن جیت کر اپنے کیریئر کا پہلا ٹائٹل حاصل کیا تھا۔

چوتھے راؤنڈ میں ٹاپ سیڈ سیمونا ہالیپ کے خلاف اس نے جس شاندار اور غیر معمولی کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔ اس سے یہ دکھائی دے رہا تھا کہ اب وہ فرنچ اوپن کی مضبوط امیدوار ہے۔ فائنل میں اس کے انتہائی جارحانہ کھیل نے اس کو حقیقت کا روپ دے دیا۔ پہلے راؤنڈ میں ایگا سواٹیک نے 2019 کی فرنچ اوپن رنرز اپ جمہوریہ چیک کی مارکیٹا ونڈروسووا کو انتہائی جارحانہ اور اٹیکنگ کھیل کا مظاہزہ کرتے ہوئے بالکل بے بس کر دیا تھا۔ پہلے راؤنڈ کے اس اپ سیٹ نے ٹورنامنٹ میں اس کے پر اعتماد کے آغاز کی بنیاد رکھی تھی۔ ایک سال پہلے فرنچ اوپن میں سیمونا ہالیپ نے ایگا کو چوتھے راؤنڈ می شکست دی تھی۔ اس وقت ایگا اسکول میں زیر تعلم تھی اور کھیل کے بجائے اس کی توجہ اپنی تعلیم پر مرکوز تھی۔ اب وہ اسکول کی تعلیم کے بعد یونیورسٹی جانے کا ارادہ رکھتی ہے لیکن اس کا کہنا ہے کہ اگر میں ٹاپ 10 میں چلی گئی اور کوئی اور گرینڈ سلام جیت لیا تو پھر میری توجہ زیادہ تر ٹریننگ پر مرکوز ہوگی اور مجھے تعلیم کیلئے وقت ہی نہیں مل پائے گا اس لیے فوری کوئی فیصلہ کرنا ممکن نہیں ہے۔ ایگا سواٹیک کو تاریخ کے مضمون سے کوئی دل چسپی نہیں رکھتی۔ ریاضی اس کا فیورٹ مضمون ہے اور اس میں جیومیٹری کو وہ زیادہ پسند کرتی ہے۔ اس نے ٹینس کے کھیل میں بھی جیوامٹری کا بھرپور استعمال کیا۔ اس کی کامیابی میں جیومیٹری کا اہم کردار ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ ٹینس کورٹ میں اپنے شاٹس کھیلنے کے دوران میں نے جیومیٹری کو اپلائی کیا۔ میں نے اس کی بہت زیادہ پریکٹس کی ہے جس کا ثمر مجھے اس حیران کن اور ناقابل یقین کامیابی کی صورت مں ملا ہے۔

فائنل میں ایگا سواٹیک کے انتہائی برق رفتار شاٹس کا صوفیہ کینن کے پاس کوئی جواب نہیں تھا۔ ایگا نے پہلے سیٹ میں بڑی تیزی کے ساتھ ابتدائی تین گیم جیت کر 3-0 کی سبقت حاصل کر لی تھی لیکن اس مرحلے پر تجربہ کار کینن نے کم بیک کیا اور مسلسل تین گیمز جیت کر کھیل میں واپس آگئی لیکن کینن اپنی جارح حریف ایگا کے خطرناک ارادوں کے سامنے زیادہ مزاحمت نہیں کر سکی۔ ایگا کورٹ کے چاروں جانب اسٹروکس کھیل رہی تھی اور اس کی فری ہٹنگ کو روکنا صوفیہ کینن کیلئے مشکل ہو رہا تھا۔ ہر شاٹ کے ساتھ ایگا کے اعتماد میں اضافہ ہو رہا تھا۔ کھیل پر اس کی مکمل گرفت کا ثبوت یہ ہے کہ ایگا سواٹیک نے آخری 18 پوائٹس میں سے 16 پوائنٹس جیتے۔ پہلے سیٹ کے دوران صوفیہ کینن نے ران میں تکلیف کی وجہ سے دو مرتبہ میڈیکل ٹائم آؤٹ لیا۔ اس نے باقی میچ تھائی بینڈیج کے ساتھ کھیلا۔ پہلے سیٹ میں صوفیہ کینن ایگا سے مزید ایک گیم جیت سکی اور ایگا نے پہلا سیٹ 6-4 سے جیت کر فائنل میں اپنے ارادوں کا اظہار کردیا۔ دوسرے سیٹ میں امریکن کھلاڑی صوفیہ کینن کو ایگا سواٹیک نے اپنے انتہائی جارحانہ کھیل سے آؤٹ کلاس کردیا اور اسے صرف ایک ہی گیم جیتنے کا موقع دیا اور 6-1 کے واضح مارجن سے دوسرا سیٹ جیت کر ٹورنامنٹ میں اپنے افسانوی سفر کو مکمل کر کے اپنے کیریئر کا پہلا ٹائٹل اور گرینڈ سلام اپنے نام کر لیا۔ وہ اس سے قبل کوئی ڈبلیو ٹی اے ٹور لیول ٹائٹل نہیں جیت سکی تھی۔

ایگا سواٹیک کو یہ توقع نہیں تھی کہ وہ ٹائٹل جیت جائے گی لیکن یہ ٹورنامنٹ اس کیلئے زندگی تبدیل کرنے والا تجربہ ثابت ہوا ہے۔ اس نے واقعی یہ ٹائٹل جیت کر تاریخ رقم کر دی کیونکہ وہ پولینڈ کی تاریخ میں مینز ویمنز دونوں کیٹیگریز میں گرینڈ سلام اعزاز جیتنے والی پہلی کھلاڑی ہے۔ اس سے قبل دو خواتین کو گرینڈ سلام فانئل کھیلنے کا اعزاز حاصل ہوا تھا۔ پولینڈ سے تعلق رکھنے والی سابق عالمی نمبر2 اگنیسیا رڈوانسکا کو آٹھ سال قبل 2012 میں امریکا کی سرینا ولیمز کے ہاتھوں ومبلڈن فائنل میں تین سیٹ کے سخت مقابلے میں شکست اٹھانا پڑی تھی۔ رڈوانسکا فرنچ اوپن میں کوارٹر فائنل مرحلے سے آگے نہیں بڑھ سکی تھی وہ دو سال قبل 2018 میں صرف 29 سال کی عمر میں ریٹائر ہوگئی تھی۔ جبکہ اوپن ایرا سے قبل 1939 میں فرنچ ٹینس چیمپئن شپ کے فائنل میں پولینڈ کی جدویگا جیدروزووسکا کو فرانس کی سائمونے میتھیو کے ہاتھوں شکست اٹھانا پڑی تھی تاہم جیدویگا نے میتھیو کے ساتھ مل کر فرنچ ویمنز ڈبلز ٹائٹل جیت لیا تھا۔ جیدویگا نے 1937 میں ومبلڈن کا فائنل بھی کھیلا تھا جس میں زیادہ تجربہ کار برطانوی کھلاڑی ڈورتھی راؤنڈ فاتح رہی تھی۔

ٹائٹل جیتنے کے بعد میڈیا نے جب ایگا سے سوالات کیے تو اس نے انتہائی معصومانہ جواب دیے اور کہا کہ مجھے یقین ہے کہ گھر میں میری بلی نے میرا فائنل دیکھا ہوگا۔ مجھے تقریر کرنا نہیں آتی میں نے دو سال قبل جونیئر ٹائٹل جیتا تھا۔ میں نہیں جانتی کہ کس کا اور کیسے شکریہ ادا کروں۔ تاہم  میں ایک شخص اپنے والد ٹوماس کی سب سے زیادہ شکر گزار ہوں جن کی حوصلہ افزائی سے یہ کامیابی ملی۔ ایگا کا کہنا تھا کہ رولینڈ گیروس کی سرخ کلے کورٹ پر دو ہفتوں میں جو کچھ ہوا وہ مجھے افسانوی لگتا ہے۔ میری فیملی بھی اس ناقابل بیان خوشی کے موقع پر یہاں موجود تھی۔ کینن ٹورنامنٹ میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کررہی تھی اور میں تناؤ میں تھی باوجود اس کے کہ میں اسے ایک مرتبہ جونیئر ٹورنامنٹ کے تیسرے راؤنڈ میں شکست دے چکی تھی لیکن وہ مجھ سے زیادہ تجربہ کار اور گرینڈ سلام ٹائٹل ہولڈر تھی۔ اس لیے میں نے ابتدا سے ہی اٹیکنگ کھیل کا مظاہرہ کیا اور میری یہ حکمت عملی کار گر رہی۔

ایگا کے والد ٹوماس بھی اسپورٹس مین ہیں اور انہوں نے 1988 کے سیول اولمپکس میں روئنگ میں پولینڈ کی نمائندگی کی تھی۔ انہوں نے ایگا اور اس کی بڑی بہن اگاٹا کو کھیلوں کی جانب راغب کیا کیونکہ وہ چاہتے تھے ان کی دونوں بیٹیاں مختلف کھیلوں میں اپنا نام پیدا کریں۔ وہ ٹیم اسپورٹس کے بجائے انفرادی کھیلوں میں حصہ لیں اور خود کو بہترین اتھلیٹ ثابت کریں کیونکہ اس میں کامیابی کے امکانات زیادہ ہوتے ہیں وہ خود بھی اس تجربے سے گزر چکے تھے۔ دونوں بہنوں اگاٹا اور ایگا نے سوئمنگ کی تربیت لینا شروع کی لیکن تھوڑے ہی عرصے میں اگاٹا کو کچھ مسائل کا سامنا کرنا پڑا تو اس نے ٹینس کے کھیل کو اپنا لیا۔ اپنی بڑی بہن کی تقلید کرتے ہوئے ایگا نے بھی ٹینس ریکٹ تھام لیا۔ اگاٹا نے 15 سال کی عمر میں 2013 میں آئی ٹی ایف جونیئر سرکٹ مکمل کیا لیکن پھر وہ انجریز کے مسائل سے دوچار ہوگئی اور کھیل میں دل چسپی لینا کم کر دی جبکہ دوسری جانب ایگا مسلسل پیش قدمی کرتی رہی۔ 14 سال کی عمر میں ایگا سواٹیک نے میرا وارسا میں تربیت حاصل کی پھر وہاں سے  لیگیا وارسا موو کر گئی۔

ایگا نے 2018 میں ومبلڈن اوپن گرلز جونیئر ٹائٹلن اور اسی سال فرنچ اوپن جونیئر گرلز ڈبلز ٹائٹل جیتا تھا۔ اس نے سمر یوتھ اولمپکس 2018 میں ڈبلز ٹائٹل جیتا تھا۔ وہ 2016 میں جونیئر فیڈ کپ جیتنے والی پولینڈ کی ٹیم میں شامل تھی جس نے امریکا کو فائنل میں 2-1 سے شکست دی تھی۔

ایگا سواٹیک کی اس فتح کے ساتھ ہی گرینڈ سلام اعزاز جیتنے والی کھلاڑیوں میں ایک نئے نام کا اضافہ ہوگیا۔ گزشتہ 14 گرینڈ سلام ٹورنامنٹس کو اپنے نام کرنے والی وہ 9ویں کھلاڑی ہے جس سے بخوبی یہ اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ سیرینا ولیمز کی بچی کی پیدائش‘ اس کے فٹنس مسائل اور ڈھلتی عمر کے ساتھ اب کسی ایک کھلاڑی کی ٹینس کورٹ پر بالادستی قائم نہیں ہے۔ اب کھلاڑیوں کی نئی نسل ابھر کر سامنے آ رہی ہے جس سے ٹینس کے کھیل کا مستقبل وابستہ ہے۔ ان میں ناؤمی اوساکا‘ ایشلے بارٹی‘ صوفیہ کینن‘ امانڈا اینیسمووا‘ اینڈریسکو‘ کوکو گاؤف اور کئی کھلاڑی شامل ہیں۔ ایگا سواٹیک کیشکل میں ٹینس کے افق پر ایک روشن ستارے کا اضافہ ہوا ہے جو مستقبل میں اپنے کھیل سے ناصرف لوگوں کو مخظوظ کرے گی بلکہ مزید اعزازات اپنے نام کرے گی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube