ہوم   >  بلاگز

وکلا گردی کی اصطلاح کیسے وجود میں آئی

SAMAA | - Posted: Dec 11, 2019 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 11, 2019 | Last Updated: 2 months ago

پرویز مشرف کے دور اقتدار میں وکلا تحریک کے بعد وکلا نے عجیب و غریب رویہ اختیار کر رکھا ہے۔ وکلا نے اپنے گروپس بنا رکھے ہیں جس کے ذریعے وہ ماتحت عدالتوں سے اپنی مرضی کے فیصلے کروانے کی کوشش کرتے ہیں۔ اگر متعلقہ جج ان کی مرضی کے مطابق فیصلے دینے سے انکار کردیں تو بھری عدالت میں معزز ججوں پر تشدد سے بھی گریز نہیں کرتے۔ اگر ایسے وکلا کے خلاف قانونی کارروائی شروع کی جاتی ہے اور ججوں پر تشدد کی ایف آئی آر درج کی جائے تو بار ایسوسی ایشن اور وکلا تنظیمیں اس کی راہ میں رکاوٹ بن جاتی ہیں اور عدلیہ کا بائیکاٹ شروع کردیا جاتا ہے۔ وکلا کے اسی رویے کے باعث اب ایک نئی اصطلاح وجود میں آئی ہے جسے ’وکلا گردی‘ کہا جاتا ہے۔ سماء ٹی وی کے پروگرام 7 سے 8 میں اینکر پرسن ارم زعیم نے آج اس معاملے پر روشنی ڈالی ہے۔ انہوں نے کیا کہا آپ بھی سنئے

WhatsApp FaceBook
 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube