کیاآپ سوشل میڈیا جنونی ہیں

By: Imran Khushal
December 8, 2016

20141117180945-right-business-wrong-social-media-culture

اس سے پہلے کہ آپ اپنے یا کسی دوسرےشخص کے  بارے رائے قائم کریں یہ ضروری ہے کہ آپ کو پتا ہونا چاہئے کہ ایڈکشن کیا ہوتی ہے تاکہ اگلے مرحلے میں اس کے علاج کی طرف بڑھا  جائے۔ سائیکالوجی ٹو ڈے  کے مطابق  ایڈکشن دراصل ایک بے قابو ذہنی (جسمانی )حالت کا نام ہے،جس میں مبتلا شخص کسی نشہ آور شے جیسا کہ شراب، کوکین یا چرس وغیرہ کا استعمال کرنے یا جوا کھیلنےاورغیر ضروری خرید و فروخت کرنے جیسی حرکات سے خود کو روک نہیں سکتا۔ گو وقتی طور پر اس طرح کی ایڈکشن کے فُل فِل ہونے سے لطف اندوزی کا احساس ہوتا ہے لیکن  کسی بھی شے کی ایڈکشن ایڈکٹس کی صحت کو متاثر کرنے کے ساتھ ساتھ ان کی ذاتی اور کاروباری زندگی کو بھی بری طرح متاثر کرتی چلی جاتی ہے۔

اس  کا مطلب یہ ہوا کہ کسی بھی ایسی حرکت کو  ایڈکشن کہا جا سکتا ہے، جسے کوئی شخص شعوری یا لاشوری طور پر کرےاور پھر کرتا چلا جائے۔اس حرکت سے نہ صرف اس کی اپنی صحت متاثر ہو بلکہ اس سے اس کی روز مّرہ سرگرمیوں میں بھی خلل پیدا اور وقت گزرنے کے ساتھ اس کےمزید برے نتائج برآمد ہوں۔

social-media-crazy (2)

اس لحاظ سے سوشل میڈیا ایڈکشن یہ ہوئی کہ آپ نے فیس بک پراسٹیٹس اپ ڈیٹ کرنے کے لیے موبائل اُٹھایا یا کمپیوٹر پر لاگ ان کیا لیکن دوگھنٹے گزرنے بعد آپ کو خیال آیا کہ آپ نے  اپنے دفتر کا کوئی کام کرنا تھا یا اپنے بچوں کو ہوم ورک کروانا تھا یا کسی کو ملنے جانا تھا یا شام کے کھانے کے لیے کچھ پکانا تھااورآپ اس سارے وقت میں کسی ایسے شخص یا جگہ کی تصویریں دیکھتے رہے جس کا دراصل آپ کی یا آپ کے خاندان کی زندگی سے دور دور کا بھی کوئی تعلق نہیں۔

اگر آپ دن رات کسی بھی لمحے فیس بک ، ٹویٹر ، انسٹا گرام یا   دیگر کسی سوشل میڈیا ویب سائٹ پر آن لائن ہیں اور ہر ایک نوٹیکفیکشن پر آپ کا ہاتھ حرکت میں آتا ہے اور آپ کی انگلیوں آپ کی اسمارٹ ڈیوائیس پر ٹپ ٹپ کرنے لگتی ہیں،اگرآپ اپنےاردگردسےبے خبر سوشل میڈیا پر گھنٹوں  رینڈم تصویروں پر لائیکس اور کمنٹس کرتے چلے جاتے ہیں    ،اگر آپ کو   زندگی میں ہونے والے غیر معمولی واقعات کو جی بھر کے جینے کی بجائے انھیں فوری طور سوشل میڈیا پر شئیر کرنے کی فکر رہتی ہے اور اگر آپ بستر سے اٹھنے سے لیے کر سونے تک ہر وقت اپ لوڈ اور ڈاؤن لوڈ کے چکر میں رہتے ہیں تو یقیناً آپ سوشل میڈیا ایڈکٹ ہیں۔

02 Sep 2013, Hanoi, Vietnam --- epa03847754 A young woman uses social networking site Facebook on her phone in a cafe in Hanoi, Vietnam, 02 September 2013. A new Vietnamese government decree banning internet users from posting information found online on social media sites took affect on 01 September. According the decree, blogs and social media sites, such as Twitter and Facebook, should be used to provide and share personal information only. EPA/LUONG THAI LINH --- Image by © LUONG THAI LINH/epa/Corbis

ذرا سوچیئے آپ اپنے ہم سفر کے ساتھ ایک خوبصورت مقام پر ہیں۔ شام ہونے والی ہے۔ سورج ڈوبنے کو ہے۔ ہلکی ہلکی ہوا چل رہی ہے  اور فضا میں ایک خوشگوار احساس ہے۔ سوچئے کہ یہ لمحہ کتنی مدت کے بعد آیا ہے، سب کچھ ویسا ہے جیسا آپ نے کبھی خواب میں دیکھا تھا ۔ اب فیصلہ کیجئے کہ آپ اس منظر سے کس  وقت لطف اندوز ہونا چاہتے ہیں۔ اسی وقت جب یہ سب ہو رہا ہےیا بعد میں،لیکن بعد میں کب؟

اگر اس بات کی کوئی گارنٹی نہیں کے آپ جن لمحات کو آج کیمرے کی آنکھ سے محفوظ کر کے آئن  لائن شیئر کر رہے ہیں، ان سے دوسرے لوگ لطف اندوز ہو رہے ہوں یا ان سے مستقبل میں کبھی آپ خود  لطف اندوز ہو سکیں تو عقلمندی کا تقاضا کہ ہر لمحے کو (اسی کے )حال میں جیا جائے۔گھنٹوں سوشل میڈیا پر برباد کرنے کے بجائے حقیقی زندگی میں کچھ کیا جائے۔ یاد رکھیں سوشل میڈیا آپ کی ذات کا ایک جزو ہے لیکن اگر آپ اس کو اپنی زندگی کا کل بنا چکے ہیں تو آپ یقناً ایڈکٹ ہو چکے ہیں اور آپ کو فوری علاج کی ضرورت ہے

Email This Post
 
 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.