Sadia Batool

Writing is an adventure for the author; she writes to create a difference in the lives of people around her. Sadia is a lecturer and loves to writes on politics and social issues.

حفظ ما تقدم

یہودیوں سے بھرے بحری جہازوں کو امریکی سرحدوں سے واپس لوٹنا پڑا تھا، نازی ازم کی لٹکتی تلوار سے ہونے والی یقینی موت سے بچانے کے لیے امریکی ریاست نے یہودیوں کی کوئی مدد نہیں کی تھی، ایک خاص مزہب کے لوگوں کو مرنے کے لیے بے یارومددگار چھوز دیا گیا تھا۔اس سانحے کو صدی…

Read More
 

۔میری ڈائری سے661پی کے

پوری وادی پہ سایہ کیے ترچ میر کا عکس کنہار کے بہتے پانی میں ایک عجیب تاثر پیدا کرتا ہے، ایک ایسا تاثر جسے لفظ کبھی مکمل بیان نہیں کر سکتے، میں آج تک اس کے سحر میں جکڑا ہوا تھا۔ بہت سال بعد دل پھر وہی بہار دیکھنے کو چاہ رہا تھا۔کام سے دخصت…

Read More
 

خدا میرا بھی ہے

جذباتیت اور احساسات کی شدت میں ڈوبی غزلیں، ڈرامے اور گانے پاکستانی معاشرے میں کافی مقبول ہیں، الفاظ کے ہیر پھیر سے مسئلہ سمجھانے کی کوشش یہاں اکثر ہی رائیگاں جاتی ہے جب تک اُن کو کسی دکھ بھری یا محبت بھری کہانی کے ساتھ جوڑا نہ جائے، ان کہانیوں نے اس معاشرے میں ہزاروں…

Read More
 

نہیں ممکن اندھیروں سے اجالےکاوجود

تحریر: سیدہ سعدیہ بتول یہاں کا تو نظام ہی خراب ہے ہم کچھ نہیں کرسکتے ،  باؤ جی ،بجلی کے بل اس لیے زیادہ آتے ہیں کہ لوگ بجلی چوری کرتے ہیں پھر  قیمت تو پوری کرنی پڑتی ہے ہاں اگر آپ بل کم کروانا چاہتے ہیں تو چائے پانی کا بندوبست کر دیں کام…

Read More
 

زنداں لہو رنگ

۔۔۔۔۔**  تحریر : سیدہ سعدیہ  **۔۔۔۔۔ بیڑیاں، زنجیریں اور سلاخیں قیدیوں کا مقدر ہوتی ہے، کوئی قیدی گناہ کی سزا بھگتتا ہے کوئی بے گناہی کی، کسی کو اپنے کئے کی قیمت سر دے کر چکانی پڑتی ہے تو کوئی کسی کیلئے سر دیتا ہے۔ یہ کہانی ہر قید خانے کی ہے، ہزاروں قیدیوں کی…

Read More
 

رب کب بہلتا ہے

تحریر: سیدہ سعدیہ  اعمال کی آزادی انسان کی فضیلت کی سب سے بڑی دلیل ہے۔ رب نے روشنیاں اور اندھیرے چھانٹ کر الگ کر دیے۔ پھر انسان کو علم بخشا اور صلاحیت دی کہ وہ اپنے لیے جو چاہے منتخب کرے ۔اچھائی اور برائی کی تفریق اس قدر واضح رکھی کہ منتخب کرنے والا کسی…

Read More
 
 
 
 

مصنفین