Muhammad Fayyaz Raja

Author works as Special Correspondent at Private TV Chanel. His is keen to cover political and Foreign Affairs, Defense Issues and Social Sector. Tweets as @mfayyazraja.

الف نون

یہ جون 1965 کے دن تھے کہ جب پاکستان ٹیلی ویژن لاہور سینٹر کے ایک عام سے اسٹوڈیو سے زرا پرے ہٹ کے چار کی ٹولی براجمان تھی۔ آغا ناصر، اسلم اظہر، فضل کمال اور کمال احمد رضوی۔ ایک نئے ڈرامے کے ٹائٹل پر زور وشور سے بحث اور سوچ بچار جاری تھی۔ نشر ہونے…

Read More
 

سرے محل، موقع محل اور سپنوں کا محل

کہانی جو میں، آج آپ کو سنانے جا رہا ہوں، وہ زیادہ نہیں صرف 20 برس پرانی ہے اور اس کہانی کے نام ، کردار اور واقعات ہرگز فرضی نہیں اور نہ ہی اس کہانی کی ، آج کے دور کی کسی کہانی سے مماثلت “محض اتفاقیہ” ہوگی۔اس کہانی کو سمجھنے  اور اس کے حقانیت پر…

Read More
 

تعلیم 2 روپے، صحت 90 پیسے

امیر علی بس نام ہی کا امیر ہے۔ اس کی مہینہ بھر کی تنخواہ ان لاکھوں پاکستانیوں سے ذرا ہی زیادہ ہے جو خط غربت سے نیچے کی زندگی گزار رہے ہیں۔ اس کی بیوی “خوش بخت بیگم” ہر ماہ اپنے شوہر کو تنخواہ ملنے سے تین چار دن قبل ہی اپنے ذہن میں گھر…

Read More
 

غالب، تعلیم بالغاں اور تنہائیاں

     ۔۔۔۔۔**  فیاض راجہ  **۔۔۔۔۔ آج سے لگ بھگ کوئی 30 برس پہلے جنوری 1986ء میں حسینہ معین کے خوبصورت قلم سے نکلی لافانی جذبوں کی کہانی “تنہائیاں” کی پہلی قسط پاکستان ٹیلی ویژن پر نشر ہوئی تو اس نے پورے ملک میں دھوم مچادی، یہ کہانی تھی دو بہنوں، زارا (شہناز شیخ) اور سنیہ (مرینہ…

Read More
 

کہانی بڑی پرانی ۔۔

تین برس قبل  مئی 2013 کو ہونےو الے عام انتخابات، اس لحاظ سے پاکستانی سیاسی تاریخ کے انوکھے، منفرد اور دلچسپ ترین انتخابات تھے کہ ان کی شفافیت  پرحکمران جماعت مسلم لیگ نوازسمیت تقریبا تمام ہی سیاسی جماعتوں نے سوالات اٹھائے۔ یہ علیحدہ بات ہے کہ بعد میں مبینہ دھاندلی کی تحقیقات کے مطالبے کو…

Read More
 

پانامہ کا شوربا اور آف شور بوٹیاں

کسی گاوں میں ایک مولوی صاحب (گاوں میں مولوی صاحب کو” میاں جی ” بھی کہتے ہیں ) رہتے تھے ۔ ایک دن ان کے گھر میں ایک پڑوسی کی مرغی گھس آئی۔ مولوی صاحب کی بیوی نے کہا۔ ” ایک عرصہ سے مرغی کا گوشت نصیب نہیں ہوا، اگر اس کو ذبح کرکے پکا…

Read More
 

وہ 640 دن

  آج سے 37 برس قبل چار اپریل 1979 کو پاکستان کے سابق صدر اور سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کو تختہ دار پر چڑھا دیا گیا، کہانی تین اور چار اپریل 1979 کی درمیانی رات دو بج کر چار منٹ پر اپنے اختتام کو پہنچ گئی تھی، مگر اس کہانی کا پہلا باب ٹھیک…

Read More
 
 
 
 

مصنفین