Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

ایران: 1980کی جنگ میں مارےگئے عراقی فوجیوں کی باقیات دریافت

SAMAA | - Posted: Jan 24, 2022 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 24, 2022 | Last Updated: 4 months ago
[caption id="attachment_2506727" align="alignnone" width="800"] فوٹو: اے ایف پی[/caption]

ایران میں ایک کسان فیملی اپنے فارم میں لیموں کے درخت لگانے کے لیے کھدائی کر رہی تھی کہ اسی دوران انہیں تین عراقی فوجیوں کی باقیات ملی ہیں۔

غیر ملکی خبر ایجنسی اے ایف پی کے مطابق یہ عراقی فوجی 1980 سے 1988 کے درمیان ایران عراق جنگ کے دوران مارے گئے تھے۔

جن فوجیوں کی باقیات ملی ہیں انہوں نے ملٹری ڈاگ ٹیگز پہن رکھے تھے جبکہ انکے خاندان کے افراد کو تلاش کرنے کے لیے کئی صحافی سوشل میڈیا پر پوسٹ شیئر کر رہے ہیں۔

یہ دریافت ایک ایسے خاندان نے کی ہے جو جنوب مغربی ایران میں اھواز قصبے کے قریب دار چیا گاؤں کے باہر ایک فارم کا مالک ہے۔

عراقی ٹی وی چینل آئی نیوز کے ساتھ کام کرنے والے صحافی رفیع الحفید کی طرف سے 12 جنوری کو ٹویٹر پر ایک ویڈیو شیئر کی گئی تھی جس میں دو کھوپڑیوں سمیت ہڈیاں دکھائی دیتی ہیں۔

[caption id="attachment_2506722" align="alignnone" width="800"]Dog Tags فوٹو: اے ایف پی[/caption]

ویڈیو بنانے والے کسان کا کہنا تھا کہ ’ہم اپنے فارم میں لیموں کے درخت لگا رہے تھے کہ اس دوران ہمیں دو فوجیوں کی باقیات ملیں‘۔

آخر میں، تین فوجیوں کی باقیات دریافت ہوئیں جن کے ڈاگ ٹیگز پر ان کے نام اور بلڈ گروپس لکھے ہوئے ہیں۔

پچھلے چند سالوں میں، بین الاقوامی ریڈ کراس کی نگرانی میں ایران اور عراق کے درمیان فوجیوں کی باقیات کے متعدد تبادلے ہوئے ہیں۔ جنوری 2021 میں عراق نے چار عراقی فوجیوں کی باقیات کے بدلے 57 ایرانی فوجیوں کی باقیات ان کے وطن واپس بھیجیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube