Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  16

ٹیکسز میں اضافے کے بعد سوزوکی نے نئی قیمتوں کا اعلان کردیا

SAMAA | - Posted: Jan 19, 2022 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 19, 2022 | Last Updated: 4 months ago

منی بجٹ میں بڑھائے گئے ٹیکسز کے بعد  پاک سوزوکی کی گاڑیوں میں ڈیڑھ لاکھ روپے تک اضافہ ہوگیا۔

پاک سوزوکی نے سیلز ٹیکس اور فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی میں اضافے کے بعد اپنی گاڑیوں کی نئی قیمتوں کا اعلان کردیا ہے جس کے مطابق آلٹو وی ایکس کی قیمت میں 32ہزار روپے اضافہ ہوگیا الٹو وی ایکس کی قیمت پہلے 12لاکھ 74ہزار روپے تھی جو بڑھ کر13لاکھ 6ہزار روپے ہوگئی ہے۔ آلٹو وی ایکس ایل کی قیمت بھی 43ہزار روپے کے اضافے سے 17لاکھ4ہزار روپے سے بڑھ کر 17لاکھ 47ہزار روپے ہوگئی ہے جب کہ آلٹو وی ایکس آر 38ہزار روپے کے اضافے سے 15لاکھ 8ہزار روپے سے بڑھ کر 15لاکھ 46ہزار روپے تک پہنچ گئی ہے۔

کلٹس اے جی ایس کی قیمت میں ڈیڑھ لاکھ روپے کا اضافہ ہوگیا ہے جس سے اس گاڑی کی قیمت 22لاکھ72ہزار روپے سے بڑھ کر24لاکھ 22ہزار روپے ہوگئی ہے اور کلٹس وی ایکس ایل 1لاکھ 39ہزار روپے کے اضافے سے 21لاکھ 5ہزار روپے جب کہ کلٹس وی ایکس آر 1لاکھ 26ہزار روپے کے اضافے سے19لاکھ 4ہزار روپے سے بڑھ کر20لاکھ 30ہزار روپے پر پہنچ گئی۔

ویگن آر۔اے جی ایس کی قیمت پہلے 20لاکھ 24ہزار روپے تھی جس میں ایک لاکھ34ہزار روپے کا اضافہ ہوا ہے اور اب اس ماڈل گاڑی کی قیمت 21لاکھ58ہزار روپے ہوگئی ہے۔

ویگن آر۔وی ایکس ایل کی قیمت بھی ایک لاکھ23ہزار روپے کے اضافے سے18لاکھ52ہزار روپے سے بڑھ کر19لاکھ74ہزار روپے اور ویگن آر۔وی ایکس آر کی قیمت ایک لاکھ 17ہزار روپے کے اضافے سے 17لاکھ60ہزار روپے سے بڑھ کر18لاکھ76ہزار روپے تک پہنچ گئی ہے۔

بولان وی ایکس کی قیمت میں بھی 29ہزار روپے کا اضافہ ہوگیا ہے جس سے بولان وی ایکس کی قیمت11لاکھ 49ہزار روپے سے بڑھ کر11لاکھ 78ہزار روپے ہوگئی ہے۔

پاک سوزکی کے ترجمان شفیق احمد کے مطابق گاڑیوں کی قیمتوں میں اضافہ منی بجٹ میں گاڑیوں پر ٹیکسز بڑھانے کی وجہ سے ہوا ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان آٹو مینو فیکچرز ایسوسی ایشن نے حکومت سے درخواست کی ہے کہ منی بجٹ منظوری سے قبل جن گاڑیوں کی بکنگ ہوئی ہے اور ڈیلوری ابھی نہیں ہوئی ان پر ان نئے ٹیکسز کا اطلاق نہ کیا جائے لیکن ابھی تک حکومت کی جانب سے جواب نہیں ملا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube