Saturday, January 29, 2022  | 25 Jamadilakhir, 1443

ترجمان وزیراعلیٰ پنجاب نے لیگی ایم پی اے حنا بٹ کو ’’چل جھوٹی ‘‘ کہہ دیا

SAMAA | - Posted: Mar 24, 2019 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 24, 2019 | Last Updated: 3 years ago

سیاست میں مخالفین سے الجھنے کا چلن نیا نہیں لیکن بعض اوقات سیاستدان حد ہی کردیتے ہیں ۔ مناسب یا نامناسب کا سوچے بغیر تنقید برائے تنقید کے چکر میں ایک دوسرے پر ایسے وار کرتے ہیں کہ کیا ہی کہنے، جس کےبعد سوشل میڈیا پر حامیوں کو فضول کی بحث کیلئے موضوع مل جاتا ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے ترجمان شہباز گل اور ن لیگ کی رکن پنجاب اسمبلی حنا پرویز بٹ میں کچھ ایسے ہی الفاظ کی جنگ چھڑ گئی۔ شہباز گل نے ٹوئٹر پر حنا بٹ کو ’’چل جھوٹی‘‘ کہہ ڈالا۔

چند روز قبل نواز شریف کی تشویشنا ک صحت سے متعلق مریم نواز کی ایک ٹویٹ کے جواب میں شہباز گل نے لکھا کہ نواز شریف کی صحت اچھی ہے، بلڈ پریشر میں معمولی اضافہ ہوا ہے۔ شہباز گل نے یہ بھی لکھ ڈالا کہ سابق وزیراعظم نے کیا کھایا۔ بولے ملاقات کی اجازت نہ دیے جانے سے متعلق بےبنیاد خبروں پر کان نہ دھریں۔

جواب میں حنا پرویز بٹ نے انہیں وزیراعلیٰ کا تنخواہ دار کہتے ہوئے مشورہ دے ڈالا کہ نواز شریف کے چاہنے والے کروڑوں ہیں، ان کی فکر چھوڑ کر وزیراعلیٰ کی کلاس پر توجہ دیں۔

حنا پرویز کے ایسے جواب پر شہباز گل بھی پیچھے نہ رہے۔ ٹوئٹر پر لکھا کہ آپ میں اور ہم میں یہی فرق ہے، آپ کو سارے اپنے جیسے لگتے ہیں۔ تنخواہ لینے کے الزام سے انکار کرتے ہوئے شہباز گل نے طعنہ دیتے ہوئے لکھا کہ آپ کو پہلی بار اسمبلی کے باہر تھوک لگا کر صفحہ پلٹتے دیکھا تھا، ایسی سوچ پر کیسا شکوہ۔

معاملہ یہیں ختم نہیں ہوا، اگلے ہی روز حنا بٹ ایک ٹویٹ میں شہباز گل پر صوبائی حکومت سے گاڑی ، گھر اور 4 ملازمین کے علاوہ دیگر مراعات لینے کا بھی الزام عائد کیا۔

ایسے الزامات پر شہباز گل بھڑک اٹھے اور حنا بٹ کو چل جھوٹی کہتے ہوئے طعنہ دے ڈالا کہ “کچھ لوگوں” کی طرح ہم نے نہ تو انگلی پہ تھوک لگانا سیکھا نہ حکومت کو۔

حنا بٹ خواتین کی مخصوص نشستوں پر رکن پنجاب اسمبلی منتخب ہوئی ہیں۔

 

 

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube