Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

کراچی میں درجہ حرارت 41 تک پہنچ گیا،گرم ہوائیں

SAMAA | - Posted: May 14, 2022 | Last Updated: 2 days ago
SAMAA |
Posted: May 14, 2022 | Last Updated: 2 days ago

Pakistan's deadliest heat wave on recordکراچی میں ہفتہ 14 مئی کی دوپہر درجہ حرارت 41 ڈگری تک پہنچ گیا، جب کہ شہر میں سمندری ہوائیں بند ہونے سے گرمی کی شدت مزید بڑھ گئی ہے۔

ہیٹ اسٹروک

قومی ادارہ صحت نے کراچی میں ہیٹ اسٹروک کے پیش نظر ایڈوائزری جاری کردی ہے۔ متعلقہ اداروں کو ہیٹ اسٹروک کی روک تھام کے حوالے سے بروقت اور مناسب اقدامات کی ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ ہیٹ اسٹروک ایسی طبی حالت ہے جس کا بروقت مناسب علاج نہ کیا جائے تو یہ جان لیوا ثابت ہو سکتی ہے۔

ہیٹ اسٹروک کی علامات میں خشک،گرم اورسرخ جلد، پسینے کا نہ آنا،بے ہوش ہوجانا،متلی یا الٹی، کمزوری یا سستی،بخار، سر درد اور دل کی دھڑکن کا تیز ہونا شامل ہے،ہیٹ اسٹروک اعضاء کو بھی نقصان پہنچا سکتا ہے یا معذوری کا سبب بن سکتا ہے۔

شیر خوار،65 سال سے زائد عمر کے افراد، ذیابیطس اور ہائی بلڈ پریشر کے مریض،ایتھلیٹس اور آئوٹ ڈور کام کرنیوالے ورکرز کو ہیٹ اسٹروک کا زیادہ خطرہ ہوتا ہے۔

قومی ادارہ صحت نے ہدایات دی ہیں کہ گرم موسم میں زیادہ پانی پئیں اورزیادہ درجہ حرارت والی جگہوں پر براہ راست سورج کی روشنی میں جانے سے گریز کریں،سر کو ٹوپی سے ڈھانپیں اورہلکے رنگ کے ڈھیلے کپڑے پہنیں،براہ راست سورج کی روشنی میں کام کرنے والے افراد کو وافر مقدار میں پانی کا استعمال کرنا چاہیے۔

کراچی

میٹ آفس کے مطابق کراچی میں آج بروز ہفتہ 14 مئی کو بھی گرمی کی شدت برقرار رہے گی۔ سمندری ہوائیں معطل ہونے سے گرمی کا زور باقی رہے گا۔ آج صبح کے اوقات میں کراچی کا کم سے کم درجہ حرارت 28.7 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

شہر کی ہوا میں نمی کا تناسب 66 فیصد، جب کہ گرم ہوائیں شمال مغرب سے 12 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چل رہی ہیں۔ ادارے کے مطابق کراچی میں فی الحال بارش کا کوئی امکان نہیں۔

ملک کے دیگر علاقے

گرمی کی لہر کے باعث پنجاب، اسلام آباد،خیبرپختونخوا ، گلگت بلتستان اور کشمیر میں دن کا درجہ حرارت 07 سے09 جب کہ سندھ اور بلوچستان میں دن کا درجہ حرارت 06 سے08 ڈگری سینٹی گریڈ معمول سے زیادہ رہنے کا امکان ہے۔

لاہور میں بھی آج پارہ 46 ڈگری سینٹی گریڈ تک پہنچنے کا امکان ہے، محکمہ موسمیات کے مطابق وسطی اور جنوبی میدانی اضلاع میں گردآلود ہوائیں چلنے کا امکان ہے، جب کہ اس دوران ملک کے میدانی علاقے شدید گرمی کے زیراثر رہیں گے۔

بارش

شام یا رات کے اوقات میں بالائی خیبر پختونخوا، خطہ، پوٹھوہار اور کشمیر میں چند مقامات پر آندھی، گرد آلود ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ ہلکی بارش ہو سکتی ہے۔

نیا الرٹ جاری

محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ آئندہ دو روز میں درجہ حرارت دو سے تین پوائنٹ کم ہوگا۔ 17مئی سے گرمی کی لہر دوبارہ شدت پکڑے گی۔ میٹ آفس کے مطابق ملک کے بیشتر علاقوں میں اگلے ہفتے کے دوران بھی گرمی کی لہر برقرار رہے گی، تاہم 14 مئی کی شام یا رات سے 17 مئی کے درمیان ملک کے بیشتر حصوں میں گرمی کی لہر قدرے کم ہوگی۔

اس دوران شمالی بلوچستان ، بالائی سندھ، پنجاب، خبر پختونخوا، گلگت بلتستان اور کشمیر میں بعد دوپہر اور شام آندھی ، تیز ہوائیں اور گرج چمک کے ساتھ کہیں کہیں پر بارش کا امکان ہے۔

رواں ماہ 18 مئی سے ملک کے بیشتر علاقوں میں دن کے درجہ حرارت میں ایک بار پھر اضافہ ہوگا اور گرمی کی شدت بڑھے گی۔

میٹ آفس کی جانب سے شدید گرمی کے دوران مندرجہ ذیل ممکنہ اثرات کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔

شدید گرم اور خشک موسم کے باعث آبی ذخائر، فصلوں، سبزیوں اور باغات کو پانی کی کمی کا خطرہ

زیادہ درجہ حرارت کے باعث انرجی اور پانی کی کھپت بڑھ جائے گی۔

زیادہ درجہ حرارت ہیٹ اسٹروک کا سبب بن سکتا ہے، خصوصاً بزرگ شہریوں اور بچوں کیلئے یہ خطرناک ہیٹ ویو ہوگی۔

اگلے ہفتے کے دوران دریاؤں میں پانی کا بہاؤ مزید بڑھنے کا امکان ہے۔

احتیاطی تدابیر

عوام دھوپ اور گرمی سے بچاؤ کیلئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں۔

کسان موسمی حالات کے مطابق فصلوں کو پانی دینے کے مناسب اقدامات کریں۔

مویشیوں اور پالتو جانوروں کی ضروریات کا خاص خیال رکھیں۔

عوام زندگی کے تمام شعبوں میں پانی کے محتاط استعمال کا خیال رکھیں۔ ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ شہری موجودہ گرم موسم کے دوران بلاضرورت گھروں سے نہ نکلیں اور اس دوران پانی کا زیادہ استعمال کیا جائے۔

گزشتہ روز موسم کیسا رہا

گزشتہ روز 13 مئی بروز ہفتہ جیکب آباد میں درجہ حرارت 49 اعشاریہ 5 سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق ملک میں درجہ حرارت معمول سے 6 سے 9 ڈگری سینٹی گریڈ زیادہ رہا، مختلف علاقوں میں یہ سلسلہ رواں ہفتے کے اختتام تک رہے گا۔ اسلام آباد، کراچی، لاہور، پشاور میں آج درجہ حرارت 40 ڈگری سینٹی گریڈ تک ریکارڈ کیا گیا۔ نواب شاہ، لاڑکانہ، جعفرآباد، جھل مگسی اور سبی میں درجہ حرارت 50 سینٹی گریڈ رہنے کا امکان ہے، جب کہ راجن پور میں 49، حیدرآباد، میرپورخاص، مٹیاری میں درجہ حرارت 48 ڈگری سینٹی گریڈ تک جاسکتا ہے۔

ظہیر احمد بابر فارکاسٹر پی ایم ڈی کے مطابق رواں سال ہم سردیوں سے موسم گرما میں داخل ہوئے ہیں، گرمی کی شدت اور دورانیہ بڑھ رہا ہے، پاکستان نے 2015 کے بعد سے گرمی کی شدید لہروں کو برداشت کیا۔ مقامی طبی اہلکار کے مطابق جیکب آباد میں 6 سال سے ہیٹ اسٹروک کے کیسز جون جولائی کی بجائے مئی میں رپورٹ ہو رہے ہیں۔

ترجمان آبپاشی پنجاب کے مطابق بارشوں، برف باری کی کمی کی وجہ سے دریائے سندھ 65 فیصد سکڑ گیا ہے، پانی کی قلت برقرار رہی تو رواں سال فصلوں میں کمی کا حقیقی خطرہ ہے۔

لوڈشیڈنگ

دوسری جانب ملک بھر میں گرمی کی شدید لہر کے ساتھ لوڈشیڈنگ کے باعث شہریوں کی مشکلات دگنی ہوگئی ہیں۔ حیدرآباد، سکھر، نوابشاہ، گھوٹکی، جیکب آباد، سانگھڑ، ٹھٹھہ اور تھرپارکر میں 8 سے 12 گھنٹے جبکہ سیالکوٹ، فیصل آباد، ملتان، سرگودھا اور گوجرانوالہ میں 6 سے 10 گھنٹے کی لوڈشیڈنگ جاری ہے۔ بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کا کہنا ہے کہ کم بجلی ملنے کے باعث شہروں میں لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube